شہباز شریف کی نواز اور اسحاق ڈار سے ملاقات کیخلاف درخواست پر فیصلہ محفوظ

محض ملاقات کے خدشے پر عدالت وزیراعظم کو کیسے روکے؟چیف جسٹس اطہر من اللہ

اسلام آباد ہائی کورٹ نے وزیر اعظم شہباز شریف کی برطانیہ میں پاکستانی عدالتوں سے اشتہاری قرار پانے والے افراد سے ملاقات کیخلاف درخواست قابل سماعت ہونے پر فیصلہ محفوظ کر لیا۔

چیف جسٹس اسلام آباد ہائی کورٹ جسٹس اطہر من اللہ نے وزیر اعظم شہباز شریف کی برطانیہ میں پاکستانی عدالتوں سے اشتہاری قرار پانے والے افراد سے ملاقات پر پابندی کے لیے چوہدری محمد اکرم ایڈووکیٹ نامی وکیل کی درخواست پر سماعت کی۔

درخواست گزار وکیل نے بتایا کہ وزیراعظم شہباز شریف نے لندن میں نواز شریف اور اسحاق ڈار سے ملاقاتیں کیں، یہ افراد عدالت کی جانب سے اشتہاری قرار دیئے جاچکے ہیں۔

درخواست گزار کی جانب سے موقف اختیار کیا گیا سابق وزیر اعظم نواز شریف کی لندن میں مختلف مواقع پر تصاویر بھی سامنے آئیں، ایک صحافی کے ساتھ تصویر میں وہ صحتمند نظر آرہے ہیں لیکن واپس نہیں آئے۔

محمد اکرم ایڈووکیٹ نے عدالت سے استدعا کی کہ وزیر اعظم شہباز شریف کو ہدایات جاری کی جائے کہ وہ عدالتوں سے اشتہاری قرار دیئے گئے افراد سے ملاقات نہ کریں۔

چیف جسٹس اطہر من اللہ نے استفسار کیا کہ وزیراعظم کسی اشتہاری سے ملیں گے محض اس خدشے پر کیسے کوئی آرڈر جاری کر دیں۔

عدالت نے درخواست قابل سماعت ہونے پر فیصلہ محفوظ کر لیا۔

Ishaq Dar

NawazSharif

PM SHAHBAZ SHARIF

Tabool ads will show in this div