ایک کروڑ 18 لاکھ روپے کا تکیہ

خالص مصری کپاس اور اصلی ریشم سے بنے اس تکیے میں سونا، ہیرے اور قیمتی پتھر جڑے ہیں

ہم میں سے بیشتر لوگ اپنے تکیے کے علاوہ پرسکون نیند کا مزہ نہیں لے پاتے لیکن کیا آپ ایک کروڑ 18 لاکھ روپے کا تکیہ خریدیں گے؟

اکثر ایسا ہوتا ہے کہ ہمارے لئے روزمرہ کے استعمال ایک عام سی چیز کی قیمت اندازوں سے کئی گنا زیادہ ہوتی ہیں اور ہم سوچتے ہیں کہ بھلا اس چیز کے لئے کون بے وقوف اتنی بڑی بڑی رقم ادا کرے گا۔

ایسی ہی ایک چیز تکیہ بھی ہے لیکن کیا آپ ایک تکیہ ایک کروڑ 18 لاکھ روپے میں خریدیں گے۔

ہالینڈ سے تعلق رکھنے والے ماہر نفسیات تھجس وان ڈر ہیسٹ کا تیار کردہ یہ تکیہ دنیا کا مہنگا ترین تکیہ کہا جارہا ہے جس کی مالیت 57 ہزار امریکی ڈالرز سے شروع ہوتی ہے جو کہ پاکستان کرنسی میں ایک کروڑ 18 لاکھ روپے سے زیادہ بنتی ہے۔

تھجس وان ڈر ہیسٹ نے یہ تکیہ 15 سال کی تحقیق کے بعد بنایا ہے۔ خالص مصری کپاس سے بننے اس تکیے میں شہتوت کے کیڑے سے حاصل کیا گیا ریشم شامل ہے جب کہ اس میں غیر نقصان دہ ڈث میموری فوم بھرا ہے، لیکن یہ وہ چیزیں نہیں جو اسے منفرد اور قیمتی بناتی ہیں۔

اس تکیے کے غلاف میں 24 قیراط کے خالص سونے سمیت ہیرے اور دیگر قیمتی پتھر جڑے ہیں۔ تکیے کو 3 ڈی اسکینر کے ذریعے مکمل طور پر گاہک کو مدنظر رکھتے ہوئے بنایا گیا ہے۔

تکیہ بنانے والے کا دعویٰ ہے کہ یہ تکیہ محفوظ اور صحت مند نیند کے دوران تمام برقی مقناطیسی شعاعوں کو روکتا ہے۔

World’s Most Expensive Pillow

Tabool ads will show in this div