بھنگ پالیسی تیار، منظوری کيلئے کابينہ ميں پيش کی جائے گی

وزارت سائنس کی بھنگ پالیسی کی دستاویز سماء کو موصول
Jun 26, 2022

وزات سائنس و ٹیکنالوجی نے ہیمپ (بھنگ) پالیسی تیار کرلی جسے منظوری کےلیے جلد کابينہ ميں پيش کی جائے گی۔

دستاویزات کے مطابق پالیسی کے تحت قومی ہیمپ اور بھنگ اتھارٹی قائم ہوگی جبکہ بھنگ کی کاشت کا صنعتی لائسنس15سال کیلئے جاری ہوگا۔

مسودہ کے مطابق بيج کی درآمد،خريداری اورکاشت پراےاين ايف کی نگرانی ہوگی جبکہ وزارت خوراک بیج کی درآمد یا برآمد کا این اوسی جاری کرے گا۔

دستاویزات کے مطابق بيج کی رجسٹريشن کاسرٹيفکيٹ وفاقی ادارہ جاری کرے گا۔ پالیسی کے تحت اشیا کی مینوفیکچرنگ اور مارکیٹنگ کا این اوسی ڈريپ دے گا۔

وزارت کامرس بھنگ کی درآمد کا خصوصی پرمٹ جاری کرے گی جبکہ لائسنس ہولڈرکوکم ازکم 10ایکٹرزمین پربھنگ کاشت کرنا ہوگی۔

خیال رہے کہ پی ٹی آئی دور حکومت میں وزارت سائنس نے وفاقی کابینہ سے منظوری لیے بغیر بھنگ منصوبے کا اعلان کر دیا تھا جسے نئی حکومت نے بجٹ میں ڈراپ کر دیا۔

وفاقی وزیر سائنس و ٹیکنالوجی وزیر آغا حسن بلوچ کہتے ہیں کابینہ نے پالیسی کی منظوری نہیں دی تو منصوبہ پی ایس ڈی پی میں کیسے شامل ہوتا۔ مزید کہا بھنگ کی کاشت حساس معاملہ ہے جسے باریک بینی سے دیکھا جائے گا۔

وفاقی وزیر کا مزید کہنا تھا کہ پالیسی نہ ہونے کی وجہ سے بھنگ کی کاشت کے نوجوانوں پر منفی اثرات پڑ سکتے ہیں۔ جلد بازی کے بجائے تفصیلی جائزہ لینے کے بعد منصوبے کی منظوری ہونی چاہیے۔

Ministry of Science

Hemp Cultivation

Tabool ads will show in this div