پنجاب اسمبلی میں بلدیاتی ایکٹ 2022 منظور

وزیربلدیات پنجاب لوکل گورنمنٹ کمیشن کے چیئرپرسن ہوں گے
Jun 24, 2022

اختیارات کی نچلے درجے تک تقسیم کے لیے پنجاب حکومت نے لوکل گورنمنٹ ایکٹ 2022 کی منظوری دے دی۔

ایکٹ کے تحت ڈسٹرکٹ کونسل کی تعداد 35 جبکہ یونین کونسلز کی تعداد 4015 ہوگی۔ میونسپل کارپوریشنز 17 اور میونسپل کمیٹی کی تعداد 234 کردی گئی۔

نئے ایکٹ میں پنجاب لوکل گورنمنٹ فنانس کمیشن اورلوکل گورنمنٹ بورڈ کی بھی ری سٹرکچرنگ کردی گئی، فنانس کمیشن 17جبکہ بورڈ پنجاب 5ارکان پرمشتمل ہوگا جس کا سربراہ وزیرخزانہ پنجاب ہوگا۔

وزیربلدیات فنانس کمیشن کے چئیرپرسن ہوں گے جبکہ چار ارکان پنجاب اسمبلی لوکل گورنمنٹ فنانس کمیشن کے رکن ہونگے ،دو ارکان حکومت اور2 اپوزیشن سے ہونگے۔

اس سے قبل لاہور میں پریس کانفرنس کے دوران وزیر خزانہ پنجاب اویس لغاری نے کہا کہ یونین کونسل کا چیئرمین ہی تحصیل کا چیئرمین بن سکے گا، 14 نئی میونسپل کارپوریشن بنائی جارہی ہیں، اساتذہ کے تبادلوں کا اختیار بھی مقامی حکومتوں کے پاس ہوگا۔

اویس لغاری نے کہا لوکل گورنمنٹ کو زیادہ بااختیار بننے کیلئے اسکے وسائل میں اضافہ کررہے ہیں، مقامی حکومت کے پاس افسر کے تبادلے کا اختیار ہوگا، مقامی حکومتیں اپنے وسائل خود پیدا کرسکیں گی۔ ہر یوسی اپنے فیصلے کرنے میں آزاد ہوگی، مقامی حکومتوں کے حوالے سے تاریخی اصلاحات کی گئی ہیں۔

Punjab govt

Tabool ads will show in this div