پولیو وائرس سےبچاؤ،کراچی اورحیدرآباد کےہائی رسک اضلاع میں مہم چلائی جائے گی

مہم میں 33 لاکھ بچوں کو پولیو کے قطرے پلائے جائیں گے
Jun 24, 2022

کراچی اور حیدرآباد ڈویژن کے ہائی رسک اضلاع میں پولیو مہم چلائی جائے گی۔

کراچی میں چیف سیکریٹری سندھ ڈاکٹر محمد سہیل راجپوت کی زیر صدارت پولیو مہم کے حوالے سے اہم اجلاس ہوا۔

اجلاس میں فیصلہ ہوا کہ پیر 27 جون سے شروع ہونے والی پولیو وائرس سے بچاؤ کی مہم میں 33 لاکھ بچوں کو پولیو کے قطرے پلائے جائیں گے۔

چیف سیکریٹری سندھ ڈاکٹرمحمد سہیل راجپوت نے کہا کہ ملک میں پولیو کے کیسز سامنے آنے کے بعد صوبے میں داخل ہونے والے ہر بچے کو پولیو سے بچاؤ کے قطرے پلائے جائیں گے۔

انھوں نے بتایا کہ خیبرپختونخوا میں 10 پولیو وائرس کے کیس ظاہر ہوئے ہیں۔ پیر سے شروع ہونے والی مہم میں ہائے رسک یونین کونسل کے 33 لاکھ بچوں کو پولیو وائرس سے بچاؤ کے قطرے پلائے جائیں گے اور مہم میں 30 ہزار سے زائد پولیو ورکر حصہ لیں گے۔

صوبائی کوآرڈینیٹربرائے ایمرجنسی آپریشن سینٹر فیاض عباسی نے بتایا کہ لاڑکانہ، سکھر اور شہید بینظیر آباد کی مخصوص یونین کونسل میں 29 جون کو پولیو مہم چلائی جائے گی۔

انھوں نے مزید بتایا کہ گزشتہ مہم میں صوبے کے داخلی راستوں پر 3 لاکھ 85 ہزار سے زائد بچوں کو پولیو وائرس سے بچاؤ کے قطرے پلائے گئے تھے جن میں سے 9010 بچوں کا تعلق خیبرپختونخوا کے جنوبی علاقوں سے تھا۔

اجلاس میں چیف سیکریٹری سندھ ڈاکٹر محمد سہیل راجپوت نے کہا کہ صوبے میں داخل ہونے والے تمام بچوں کو پولیو سے بچاؤ کے قطرے پلائے جائیں۔ سندھ میں 2 سال سے کوئی پولیو وائرس کا کیس رپورٹ نہیں ہوا اور یہ ایک کامیابی ہے مگر ملک کے دیگر صوبوں سے آبادی سندھ آتی ہے اس لئے ہمیں محتاط رہنا ہوگا۔

چیف سیکریٹری سندھ نے کمشنر کراچی کوہدایت کرتے ہوئے کہا کہ خصوصی مہم کے دوران انکاری والدین کو پولیو قطرے پلانے پر آمادہ کیا جائے اور اس حوالے سے ایسے والدین کے لیے کمیونٹی اور سول سوسائٹی سے بھی بات کی جائے۔

بلوچستان کے 18 اضلاع میں انسداد پولیو مہم کا افتتاح

کوئٹہ سمیت صوبے کے 18 اضلاع میں انسداد پولیو مہم کا افتتاح سیکرٹری صحت صالح محمد ناصر نے بچوں کو پولیو سے بچاؤ کے قطرے پلاکرکیا۔

اس موقع پر سیکرٹری صحت صالح محمد کا کہنا تھا کہ انسداد پولیو مہم خصوصی مہم ہے اسے ہرصورت میں کامیاب بنایا جائے گا، کوئٹہ بلاک میں 7 اور دیگر اضلاع میں 5 روز انسداد پولیو مہم جاری رہے گی۔

سیکرٹری صحت کا کہنا تھا کہ بلوچستان میں پولیو کے قطرے نہ پلانے والے والدین کی تعداد پانچ ہزار ہے، لیکن موذی مرض سے نمنٹے کے لئے محکمہ صحت ہرممکن اقدامات کیے جائیں گے۔

ان کا کہنا تھا کہ انسداد پولیو مہم کا آغاز 27 جون سے شروع ہوگا، جس میں 12 لاکھ سے زائد بچوں کووائرس سے بچاؤ کے قطرے پلائے جانے کا ہدف مقرر ہے کیا گیا ہے۔

polio

Tabool ads will show in this div