ملزموں نے خود مدعی بن کر این آر او ٹو لے لیا، فواد چوہدری

قوانین میں تبدیلی کرکے نیب کی خودمختاری ختم کردی گئی،فواد
Jun 20, 2022

رہنما تحریک انصاف فواد چوہدری کا کہنا ہے کہ ملزموں نے خود مدعی بن کر فیصلہ کرلیا اور آصف زرداری، نوازشریف، شہبازشریف اور مریم نواز نے این آر او ٹو لے لیا۔

اسلام آباد میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے فواد چوہدری کا کہنا تھا کہ نیب کی خود مختاری کو ختم کرکے کرپشن کی کھلی چھٹی دے دی گئی۔

رہنما تحریک انصاف کا کہنا تھا کہ ترمیم کے بعد 80 فیصد مقدمات نیب سے نکل گئے۔ بار ثبوت ملزم کے بجائے نیب پر منتقل کر دیا گیا۔ بیوی بچوں اور رشتہ داروں کے نام پر آمدن سے زائد اثاثے بنانے کی بھی اجازت دے دی گئی ۔ کوئی اثاثہ خریدنے کی صورت میں منی ٹریل کی شرط بھی ختم کر دی گئی۔

نیب قوانین میں تبدیلی کے حوالے سے فواد چوہدری نے کہا کہ یہ دوسرا این آراو ہے ، جو شریف اور زرداری فیملی ریاست سے لے رہی ہے، پہلا این آراو مشرف سے لیا، دوسراریاست سے لے رہے ہیں، مشرف دور میں جتنے کیسز تھے، این آر او ون کے تحت معاف ہوگئے۔

تحریک انصاف کے رہنما کا کہنا تھا کہ آج پوری تحریک انصاف بلیک ڈے منارہی ہے، نیب قوانین میں ترامیم بدترین این آراوہے جس پر عملدرآمد ہوا ہے، نیب قوانین میں ترامیم سے خصوصاً شریف،زرداری فیملی کو فائدہ پہنچایا گیا۔

فواد چوہدری نے پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا آئی ایم ایف سےانکی ڈیل نہیں ہورہی اس لئے مہنگائی ہے، ان کا وزیرخزانہ امریکی سفیرسےکہتاہےکہ ہمارامعاہدہ کرائیں۔

فواد چوہدری کا کہنا تھا کہ ڈر لگ رہاہے کہ یہ ملک کو کس طرف لیکرجائیں گے ، انہیں کچھ سمجھ ہی نہیں آرہاکہ کرناکیاہے، پاکستان سری لنکا جیسی صورتحال کا متحمل نہیں ہوسکتا۔

انہوں نے کہا کہ پی ٹی آئی رہنما نے بتایا کہ خرم دستگیر نے اعتراف کیا احتساب سے بچنے کیلئے عمران خان کو باہر نکالا، ہم نے اس حکومت کو سازش کرکے باہرنکالا۔

NAB

PTI

fawad chaudhary

Tabool ads will show in this div