پنجاب حکومت نے صحت بجٹ میں تقریباً 100 فیصد اضافہ کردیا

اسپیشلائزڈ ہیلتھ کیئر کیلئے 151 ارب 50 کروڑ روپے مختص

پنجاب حکومت نے صوبے کے عوام کو صحت کی سہولیات فراہم کرنے کیلئے صحت کے بجٹ کو دگنا کردیا۔

شعبہ صحت کے 2022-23ء کے مجموعی ترقیاتی بجٹ میں اسپیشلائزڈ ہیلتھ کیئر کیلئے 151 ارب 50 کروڑ روپے مختص کیے گئے ہیں جو پچھلے سال کے بجٹ سے 93 فیصد زیادہ ہیں۔

اسپیشلائزڈ ہیلتھ کیئر کے اہم منصوبوں میں صحت کارڈ کے علاوہ 5 ارب روپے کی لاگت سے شروع ہونے والا اسپتالوں کی بحالی کا پروگرام سمیت منصوبے شامل ہیں۔

عوام کو صحت عامہ کی سہولیات کی فراہمی کیلئے صحت کے ترقیاتی بجٹ میں گزشتہ برس کے 60 ارب روپے کے مقابلے میں 125 ارب 34 کروڑ روپے کی خطیر رقم رکھی گئی ہے جو دگنی سے بھی زیادہ ہے۔

وزیرخزانہ پنجاب نے بجٹ تقریر کرتے ہوئے کہا کہ ہمیں فخر ہے کہ ہماری حکومت نے 2016 میں صحت کارڈ کا اجرا کیا تھا، غریب عوام کیلئے ہیلتھ انشورنس پروگرام بھی اسی اسکیم کا حصہ تھا۔

وزیر خزانہ نے کہا کہ پی ٹی آئی نے اسی اسکیم کو انساف کارڈ کا نام دیکر پنے لیے سستی شہرت کے صول کا وسیلہ بنانا چاہا، دنیا جانتی ہے انصاف کارڈ کے حوالے سے اسکے تمام دعوے اسکے باقی اعلانات کی طرح بے بنیاد چابت ہوئے۔

انہوں نے کہا ہم نے اپنی ہیلتھ اسکیم میں اس امر کو یقینی بنایا ہے کہ اس میں مختص قومی سرمائے کا زیادہ سے زیادہ حصہ غریب طبقے کو صحت کی سہولیات فراہم کرنے پر لگے، صاحب ثروت افراد کو اپنے مسائل کیلئے حکومت کے بجائے اپنے ذاتی وسائل پر انحصار کرنا چاہئے۔

PUNJAB ASSEMBLY

health budget

BUDGET 2022-23

Tabool ads will show in this div