تحریک انصاف پنجاب کی پارليمانی پارٹی دو گروپوں ميں تقسيم

تحریک انصاف پنجاب پارليمانی پارٹی کی اندرونی کہانی

پاکستان تحریک انصاف پنجاب کی پارليمانی پارٹی ميں اختلافات سامنے آگئے۔

ذرائع کے مطابق پارليمانی پارٹی میں تحریک انصاف نظریاتی گروپ اور پی ٹی آئی پرویز الہیٰ گروپ بن گیا۔

اجلاس میں پنجاب اسمبلی میں اپوزيشن ليڈر کے معاملے پر ابھی تک اتفاق نہ ہوسکا جبکہ سابق وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار اور ياسمين راشد ناراض ہوکر اجلاس سے اٹھ کر چلے گئے۔

ذرائع کے مطابق پرويز الہیٰ کی جانب سے محمود الرشيد يا راجہ بشارت کواپوزيشن ليڈربنانے کی تجويز دی گئی ہے جبکہ نظریاتی گروپ میاں اسلم اقبال کو اپوزیشن لیڈربنانے کی خواہش مند ہے۔

اس سے قبل پی ٹی آئی نے پنجاب اسمبلی میں محمود الرشید کو اپوزیشن لیڈر جبکہ ڈپٹی اپوزیشن لیڈر میاں اسلم اقبال کو بنانے کا فیصلہ کرلیا تھا تاہم اب اس پر پارٹی کے اندر اختلافات سامنے آرہے ہیں۔

واضح رہے کہ پنجاب اسمبلی کا بجٹ اجلاس 13 جون کو ہوگا، جس کیلئے اپوزیشن نے نے تمام تیاریاں مکمل کرلی ہیں، سابق وزیر قانون راجہ بشارت کی بھی عبوری ضمانت منظور کرالی گئی ہے۔

PTI

PUNJAB ASSEMBLY

Tabool ads will show in this div