شاہد خاقان نے انتخابات کی تاریخ بتادی

ملک کے معاملات نے چلنا ہے تو نیب کا ادارہ نہیں رہ سکتا

پاکستان مسلم لیگ (ن) کے رہنما شاہد خاقان عباسی نے کہا ہے کہ ملک میں عام انتخابات اکتوبر2023 میں ہونگے۔

اسلام آباد کی احتساب عدالت کےباہر سابق وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے صحافیوں سے بات کرتے ہوئے کہا کہ 22 برس تک سیاست دانوں کے جیل میں ڈالنے اور جرم ثابت کرنے پرچیئرمین نیب کوجوابدہ ہونا پڑے گا۔

شاہدخاقان عباسی نے کہا کہ ملک کے معاملات نے چلنا ہے تو نیب کا ادارہ نہیں رہ سکتا،یہ بتانا ہوگا کہ کتنے افراد پر آج تک نیب نے جرم ثابت کیا ہے۔

انھوں نےتردید کی کہ یہ بات بالکل غلط ہے کہ نیب نے ملک میں کرپشن روکی ہے، چئیرمین نیب 8 ماہ ڈیلی ویجز پر کام کرکے اب جاچکے ہیں لیکن اب وہ واپسی کی کوشش کررہے ہیں۔

لیگی رہنما نے کہا کہ ملک میں احتساب کے ادارے موجود ہیں اورایف بی آر، ایف آئی اے سمیت دیگرقوانین موجود ہیں، اگرآپ نے ملکی سیاست پراثرانداز ہونا ہے تو نیب ضروری ہے تاہم نیب اس ملک کا کرپٹ ترین ادارہ ہے۔

لوڈ شیڈنگ سے متعلق ان کا کہنا تھا کہ بجلی کی لوڈشیڈنگ پرہم کام کررہے ہیں اورآج سے ساڑھے 3 گھنٹے سے کم لوڈشیڈنگ ہوگی۔

انتخابات سے متعلق ان کا کہنا تھا کہ ملک میں عام انتخابات اکتوبر2023 میں ہونگے اور جب ملکی معیشت تباہ ہورہی تھی تو اس وقت یہ کہاں تھے؟۔

NAB

Tabool ads will show in this div