ڈالر کی قیمت میں کمی، نرخ 200 روپے سے نیچے آگئے

انٹربینک مارکیٹ میں ڈالر199 روپے کی سطح پر آگیا

پاکستان کے عالمی مالیاتی ادارے کے ساتھ معاہدے کے امکانات روشن ہوتے ہی ڈالر کی قیمت میں کمی آنا شروع ہوگئی، انٹربینک مارکیٹ میں ڈالر 2.25 روپے کمی سے 199 روپے کی سطح پر آگیا۔

جمعہ 27 مئی کو دن کے شروعات میں انٹربینک مارکیٹ میں ڈالر کی قدر میں یکدم ڈھائی روپے کی کمی ہوئی اور ڈالر 200 روپے کی سطح سے نیچے آگیا، یہ رجحان دن بھر جاری رہا اور کاروباری دن کے اختتام پر ڈالر 199.76 پیسے کی سطح پر بند ہوا۔

واضح رہے کہ نئی حکومت کے قیام کے بعد سے ڈالر کی قیمت میں اضافے کا رجحان جاری تھا، امریکی کرنسی کی قیمت میں 16 روز بعد کمی آئی ہے۔

دوسری جانب اوپن مارکیٹ میں بھی ڈالر ڈھائی روپے کی کمی سے 201 روپے کا ہوگیا۔

جمعرات کو انٹر بینک میں ڈالرکی قدر 9پیسے کے اضافے سے 202.01روپے کی سطح پر پہنچ گیا تھا جب کہ اوپن کرنسی مارکیٹ میں 50 پیسے اضافے سے ڈالر 203 روپے 50 پیسے کی بلند ترین سطح پر پہنچا۔

رواں ہفتے انٹر بینک میں ڈالر کی قدر میں 2.05روپے کا اضافہ ہوا جب کہ اوپن کرنسی مارکیٹ میں بھی ڈالر کی قدر میں ہونے والے اضافہ3.30 روپے دیکھا گیا۔

گزشتہ ہفتہ19مئی کو حکومت کی جانب سے لگژری آئٹمزکی درآمدات پر پابندی عائد ہونے کے باعث جمعہ کو پاکستانی روپے پر امریکی ڈالر کے دباؤ میں کمی ہوئی تھی لیکن پیر سے ایک بار پھر ڈالر کی قدر میں اضافے کا سلسلہ شروع ہوگیا تھا جس کی رفتار بدھ تک تیزرہی۔

مجموعی طور پررواں ماہ انٹر بینک میں ڈالرکی قدر میں اب تک15.84روپے کا اضافہ ہوا ہے جب کہ اوپن کرنسی مارکیٹ میں بھی ڈالر کی قدرمیں ہونے والا اضافہ 17.70روپے تک پہنچا۔

کرنسی ڈیلرز کے مطابق لانگ مارچ خاتمے کے بعد ملک میں جاری سیاسی عدم استحکام میں کمی آئی لیکن آئی ایم ایف سے مذاکرات کے حوالے سے غیر یقینی صورتحال سے کرنسی مارکیٹ پر بھی منفی اثرات مرتب ہوئے۔

Dollar rates

Tabool ads will show in this div