صارفین کا ڈیٹا لیک ہونے پر ٹویٹر پر 15 کروڑ ڈالر جرمانہ عائد

صارفین کی اہم معلومات آن لائن اشتہارات کیلئے استعمال کی گئیں

امریکی محکمہ انصاف اور فیڈرل ٹریڈ کمیشن نے صارفین کا ڈیٹا لیک ہونے پر ٹویٹر پر 15 کروڑ ڈالر جرمانہ عائد کردیا۔

امریکی حکام کے مطابق معروف سوشل میڈیا پلیٹ فارم صارفین کی معلومات کے تحفظ میں ناکام رہا۔ٹویٹر نے 15 کروڑ ڈالر کی اس سول پینلٹی کی ادائیگی پر آمادگی ظاہر کردی ہے۔

صارفین کا ڈیٹا ہیک ہونے اور معلومات کے تحفظ میں میں ناکامی کے الزامات پر سال 2011 میں فیڈرل ٹریڈ کمیشن نے ٹوئٹر کو اقدمات کا حکم دیا تھا۔

رپورٹ کے مطابق مئی 2013 سے 2019 تک ٹوئٹر نے اکاؤنٹ سکیورٹی کے نام پر صارفین سے انکے نمبرز اور ای میل ایڈریس مانگے اور صارفین کے نمبرز، ایڈریس اور ای میل جیسی اہم معلومات کمپنیوں کو دیں جنہیں آن لائن اشتہارات کیلئے استعمال کیا گیا۔

فیڈرل ٹریڈ کمیشن کی چیئرپرسن لینا خان نے کہا کہ ٹوئٹر نے ہراسانی کے تناظر میں صارفین سے انکی سکیورٹی کیلئے ڈیٹا لیا جس کا انجام صارفین کو آن لائن اشتہارات کیلئے ٹارگٹ کرنے پر ہوا۔

حکام کے مطابق اس پریکٹس کے نتیجے میں 140 ملین سے زیادہ ٹوئٹر صارفین متاثر ہوئے جو ٹوئٹر کی آمدنی کی سب سے بنیادی ذریعہ ہے۔

جرمانے کی سیٹلمنٹ اور صارفین کے تحفظ کیلئے اٹھائے گئے اقدامات کی توثیق فیڈرل کورٹ آف کیلیفورنیا کرے گی۔

ٹوئٹر کی جانب سے صارفین کی معلومات کی سیکیورٹی کیلئے ایک نیا جامع نظام بنایا جائے گا اور ان پرائیویسی سیف گارڈز کی ریگولر ٹیسٹنگ بھی یقینی بنائی جائے گی۔ ڈیپارٹمنٹ آف جسٹس اور فیڈرل ٹریڈ کمیشن ان اقدامات کی نگرانی کرینگے۔

دوسری جانب ٹوئٹر کے چیف پرائیویسی آفیسر ڈیمن کیرن نے اپنے ردعمل میں کہا ہے کہ ڈیٹا کو محفوظ بنانا اور معلومات کا تحفظ ہماری ترجیحات میں شامل ہے اور اس سلسلے میں اٹھائے اقدامات پر فیڈرل ٹریڈ کمیشن کے ساتھ مکمل تعاون کرینگے۔

انہوں نے کہا کہ ایف ٹی سی کے حکم کے مطابق کمپنی اپنے آپریشنز کو مزید بہتر بنانے کیلئے اقدامات اٹھارہی ہے جن کے تحت صارفین کی معلومات کا تحفظ یقینی بنایا جائے گا۔

جرمانے کی سیٹلمنٹ کے حوالے سے فیصلہ اس دن سامنے آیا ہے جب ٹوئٹر کا سالانہ شیئر ہولڈرز اجلاس جاری تھا۔ ٹوئٹر کے سب سے بڑے شیئر ہولڈر ایلون مسک نے اس میٹنگ میں کمپنی کو ٹیک اوور کرنے کیلئے اسکے نئے فنانسنگ پلان کا بھی اعلان کیا جس سے سرمایہ کاروں کا اعتماد بڑھا ہے اور اسکے شیئر کی قیمت میں بھی اضافہ دیکھا گیا۔

ٹویٹر

technology

Data Security

Tabool ads will show in this div