عمران خان کو گرفتار کرینگے؟، رانا ثناء نے اپنی مرضی بتادی

صحافی کے سوال پر وزیر داخلہ کا جواب

وزیر داخلہ رانا ثناء اللہ نے عمران خان کو گرفتار کرنے سے متعلق سوال پر اپنی مرضی بتادی۔

وزیر داخلہ رانا ثناء اللہ سے لاہور میں ایک صحافی نے پوچھا کہ کیا چیئرمین پاکستان تحریک انصاف عمران خان کو گرفتار کرنے کا ارادہ رکھتے ہیں؟، جس پر انہوں نے کہا کہ میرے دل کی مرضی ہے کہ عمران خان کو گرفتار کیا جائے۔

ان کا کہنا ہے کہ عمران خان کو گرفتار کرکے اسی سیل میں بند کیا جانا چاہئے جہاں مجھے رکھا گیا، عمران خان کی ساری سیاست 3 دن میں نکل جائے گی۔

رانا ثناء اللہ نے اپنی مرضی بتانے کے بعد یہ بھی کہا کہ اتحادی حکومت ہے لہٰذا بڑے فیصلے اتحادی جماعتوں کے سربراہان کی منظوری کے بغیر نہیں ہوسکتے، دعا کریں عمران خان کی گرفتاری کی اجازت مل جائے پھر قوم کو خوشی ملے گی۔

اس سے قبل لندن میں گفتگو کرتے ہوئے وزیر داخلہ نے کہا تھا کہ عمران خان کو گرفتار کرنے سے متعلق فیصلہ کابینہ کی مشاورت سے کیا جائے گا۔

میڈیا سے گفتگو میں وفاقی وزیر داخلہ رانا ثناء اللہ نے مزید کہا کہ وزیراعلیٰ پنجاب کی تیاری کرنے میں کوئی حرج نہیں، وزیراعلیٰ پنجاب کا الیکشن دوبارہ ہوا تو حمزہ شہباز سادہ اکثریت سے جیت جائیں گے، اسپیکر پنجاب اسمبلی چوہدری پرویز الہیٰ کیخلاف عدم اعتماد پیش ہوچکی، انہیں عدم اعتماد پر ووٹنگ کرائے بغیر اسمبلی کے اجلاس کی صدارت نہیں کرنی چاہئے۔

ان کا کہنا ہے کہ یہ نہیں کہتا ادارے ہمارے ساتھ نہیں ہیں، ادارے ہمارے نہیں بلکہ پاکستان کے ساتھ ہونے چاہیئں، شیریں مزاری کی گرفتاری میں حکومت یا کسی اور کا کوئی عمل دخل نہیں۔

IMRAN KHAN

RANA SANA ULLAH

Tabool ads will show in this div