کراچی دھماکے میں ملوث دہشت گرد کا ساتھی گرفتار، سی ٹی ڈی

ملزم منظور کا تعلق کالعدم ایس آر اے سے ہے

کاؤنٹر ٹیررازم ڈیپارٹمنٹ نے کراچی دھماکے میں مارے جانے والے دہشت گرد کے ساتھی کو گرفتار کرنے کا دعویٰ کیا ہے۔

سندھ پولیس کے محکمہ انسداد دہشت گردی نے دعویٰ کیا ہے کہ صدر کراچی اور حیدرآباد ریلوے ٹریک پر دھماکوں میں ملوث ملزم کو گرفتار کرلیا گیا۔

سی ٹی ڈی کا کہنا ہے کہ کالعدم تنظیم ایس آر اے سے تعلق رکھنے والے دہشت گرد کو گرفتار کرلیا گیا، ملزم حیدرآباد ریلوے ٹریک دھماکے میں ملوث ہے جبکہ اس نے کراچی کے علاقے صدر میں ہونیوالے دھماکے میں بھی معاونت کی۔

سی ٹی ڈی کے مطابق گرفتار مبینہ دہشت گرد کی شناخت منظور حسین کے نام سے ہوئی ہے، جو ریاست مخالف سرگرمیوں میں بھی ملوث رہا ہے، ملزم دہشت گردی کی وارداتوں کیلئے لوگوں کی ذہن سازی بھی کرتا تھا۔

محکمہ انسداد دہشت گردی کا کہنا ہے کہ گرفتار ملزم نے 15 مارچ کو اپنے ساتھی اللہ ڈنو کے ساتھ مل کر لوہے کے پائپ میں آئی ای ڈی بنائی جبکہ 23 مارچ کو حیدرآباد میں ریلی میں بم دھماکے کی بھی منصوبہ بندی کی۔

پولیس کے مطابق ملزم کا ساتھی اللہ ڈنو کراچی کے علاقے صدر میں دھماکے میں ملوث تھا جو چند روز قبل مقابلے میں مارا جاچکا ہے۔

کراچی

Terrorism

ctd

Karachi Blast

Tabool ads will show in this div