عمران خان آج بھی سسٹم، نواز شریف عوام کے لاڈلے ہیں، مریم نواز

شیریں مزاری پر سنگین الزام ہے، مجھے بغیر الزام گرفتار کیاگیا تھا، نائب صدر ن لیگ

Imran Khan is qabil nahi hai ke uska naam lon - Maryam Nawaz - SAMAATV

مریم نواز کا کہنا ہے کہ عمران خان سسٹم، نواز شریف عوام کے لاڈلے ہیں، آئین توڑنے کی حرکت نواز شریف، شہباز شریف یا مریم نواز نے کی ہوتی تو دعوے سے کہتی ہوں کہ ہماری لاشیں چوکوں پر لٹک رہی ہوتیں.

شیریں مزاری پر مقدمہ بزدار دور میں بنا، ان کیخلاف یقیناً اینٹی کرپشن یونٹ کے پاس ثبوت ہوگا، اسی لئے گرفتار کیا گیا، جب مجھے گرفتار کیا گیا تو مجھ پر کوئی الزام نہیں تھا، بغیر الزام مجھے اڈیالہ جیل میں رکھا گیا، شیریں مزاری پر سنگین الزام ہے۔**

لاہور میں مسلم لیگ ن کی سوشل میڈیا ٹیم سے خطاب کرتے ہوئے ن لیگ کی نائب صدر مریم نواز شریف نے عمران خان اور پی ٹی آئی حکومت پر کڑی تنقید کی۔

ان کا کہنا ہے کہ ملک اس وقت بہت مشکل حالات میں ہے، ن لیگ کی حکومت کو آئے ہوئے 4 ہفتے ہوئے ہیں، پاکستان معاشی طور پر وینٹی لیٹر پر ہے، اس کی بہتری کیلئے سب کو مل کر کام کرنا ہوگا، عمران خان نے کل تقریر میں کہا شہباز شریف 6 بجے اٹھتا ہے تو میرا مالی بھی 6 بجے اٹھتا ہے، انہوں نے شہباز شریف اور مالی کو طعنہ دیا۔

مریم نواز شریف نے کہا کہ کہتے ہیں ان کو تیل کی قیمتیں بڑھانے سے ڈر لگ رہا ہے، کہا گیا نواز شریف، شہباز شریف قیمتیں بڑھانے سے ڈرتے ہیں، وہ جانتے ہیں قیمتیں بڑھائیں گے تو لوگوں کے گھروں پر فاقے آجائیں گے۔

ن لیگ کی نائب صدر کا کہنا ہے کہ مجھے ٹی وی سے پتہ چلا کی شریں مزاری گرفتار ہوگئیں، شیریں مزاری کی گرفتاری کا سن کر مجھے اچھا نہیں لگا، جب مجھے گرفتار کیا گیا تب مجھ پر کوئی الزام نہیں تھا، شیریں مزاری پر کیس بزدار حکومت میں بنا، اینٹی کرپشن کے پاس ثبوت ہوگا تو ہی انہوں نے شیریں مزاری کو گرفتار کیا ہے، شیریں مزاری وزیراعظم سے بڑی تو نہیں، شہباز شریف وزیراعظم ہوتے ہوئے عدالت میں پیش ہوئے۔

انہوں نے کہا کہ نیب کی ٹیم نے نوازشریف کے سامنے مجھے گرفتار کیا تھا، میری گرفتاری کے وقت نواز شریف نے کہا تھاو قت ایک جیسا نہیں رہتا، مجھے 4 ماہ انہوں نے اڈیالہ جیل میں رکھا، پی ٹی آئی شیریں مزاری کی گرفتاری پر عورت کارڈ کھیل رہی ہے، پی ٹی آئی کو کہتی ہوں عورت کارڈ کی طرف آنا بھی نہیں، میں کسی انتقام پر یقین نہیں رکھتی، شیریں بے قصور ثابت ہوئیں تو سب سے پہلے مریم نواز ان کے ساتھ کھڑی ہوگی۔

نائب صدر مسلم لیگ ن کہتی ہیں کہ نواز شریف نے اداروں پر تعمیری تنقید کی، عمران خان آج بھی لاڈلہ ہے، نواز شریف اس سسٹم کا لاڈلہ نہیں عوام کا لاڈلہ ضرور ہے، نواز شریف کو بار بار نکالتے ہیں عوام اسے لیکر آتی ہے۔

مریم نواز نے کہا کہ چیف الیکشن کمشنر کو کہا جاتا تھا استعفیٰ دیں، جب ان کے اپنے ارکان ڈی سیٹ ہوگئے تو الیکشن کمیشن اچھا ہوگیا، جو ادارہ آپ کیخلاف حرکت میں آئے وہ میر جعفر اور میرصادق کہلاتا ہے، عمران خان اس قابل نہیں کہ اس کا نام لوں۔ ن لیگ کی نائب صدر کہتیی ہیں کہ عمران خان نے آئین توڑنے کا سنگین جرم کیا، اس لئے رات 12 بجے عدالتیں کھلیں، ایسا نہیں ہوسکتا کہ کوئی آئین توڑے اور ملک کی عدالتیں خاموش رہیں، آپ تو آرٹیکل 6 لگتا ہے۔

ان کا کہنا ہے کہ آئین توڑنے کی حرکت نواز شریف، شہباز شریف یا مریم نواز نے کی ہوتی تو دعوے سے کہتی ہوں کہ ہماری لاشیں چوکوں پر لٹک رہی ہوتیں، ایسے ناقابل تردید ثبوت نواز شریف کیخلاف ہوتے تو ان کی پارٹی صفحہ ہستی سے مٹ گئی ہوتی۔

مریم نواز کہتی ہیں کہ عمران خان کا نام دل پر پتھر رکھ کر لیتی ہوں، انہوں نے کل ملتان میں تقریر کرتے ہوئے غیر اخلاقی حملے کئے، عمران خان نے مجھ پر نہیں پاکستان کی ماؤں، بیٹیوں اور بہنوں پر حملہ کیا، ان کیخلاف سیاسی مواد اتنا ہے کہ ذاتی حملوں کی ضرورت نہیں، عمران خان کو ان کی زبان میں جواب نہیں دوں گی۔

IMRAN KHAN

SHIREEN MAZARI

MARYAM NAWAZ SHARIF

Tabool ads will show in this div