انسدادِمنشیات کیس، رانا ثنا کی درخواست پر اے این ایف سےجواب طلب

وفاقی وزیرداخلہ نے عدالت کے روبرو پیش ہوکر حاضری مکمل کروائی۔

انسدادمنشیات کی خصوصی عدالت نے رانا ثنا کی جانب سے منجمد بینک اکاؤنٹس اور پراپرٹی کھولنے کی درخواست پر اے این ایف سے جواب طلب کرلیا ہے۔

اکیس مئی کو لاہور میں انسداد منشیات کی خصوصی عدالت میں وفاقی وزیرداخلہ راناثناءاللہ منشیات اسمگلنگ کے کیس میں پیش ہوئے۔

وفاقی وزیرداخلہ نےعدالت کے روبرو پیش ہوکر حاضری مکمل کروائی۔

رانا ثناءاللہ نے اے این ایف کی جانب سے منجمد پراپرٹی اور اکاؤنٹس کھولنے کی درخواست دائر کردی۔

انھوں نے موقف دیا کہ اے این ایف کا کہنا ہے کہ رانا ثناءاللہ 10 سال سے منشیات کا کاروبار کررہا ہے تاہم یہ بنک اکاؤنٹس اور پراپرٹی 10 سال پہلے کی ہے اور اے این ایف نے حقائق کے برعکس ان کو منجمد کر رکھا ہے۔

عدالت سے استدعا کی گئی کہ یہ پراپرٹی اور بنک اکاؤنٹس بحال کرنے کا حکم دیا جائے۔ عدالت نے اے این ایف سے جواب طلب کرتے ہوئے سماعت 25 جون تک ملتوی کردی۔

اس کےعلاوہ وفاقی وزیرداخلہ رانا ثناءاللہ نے کمرہ عدالت میں وزیراعظم پاکستان شہباز شریف سےملاقات بھی کی۔

RANA SANA ULLAH

Tabool ads will show in this div