امریکی سازش کے ذریعے حکومت ہٹائی گئی

امریکی سازش کے ذریعے حکومت ہٹائی گئی

سابق وزیراعظم اور پاکستان تحریک انصاف ( پی ٹی آئی) کے چیئرمین عمران خان کا کہنا ہے کہ مجرموں نے میری ٹیم کے کام پر پانی پھیر دیا ہے۔

مائیکرو بلاگنگ سائٹ پر اپنے بیان میں سابق وزیراعظم عمران خان نے لکھا کہ تبدیلی سرکار کی امریکی سازش کے ذریعے حکومت کو ہٹایا گیا۔

اپنی ٹوئٹ میں چیئر مین پی ٹی آئی کا مزید لکھنا تھا کہ جب پی ٹی آئی حکومت ہٹائی گئی تو ہم 6 فیصد معاشی شرح نمو کے حصول کے قریب تھے۔ این آر او 2 کو اپنی اولین ترجیح بنانے والے مجرموں نے میری ٹیم کے سارے کام پر پانی پھیر دیا ہے۔

واضح رہے کہ اتوار 15 مئی کو کراچی میں پریس کانفرنس سے خطاب میں وزیر خزانہ مفتاح اسماعیل کا کہنا تھا کہ تحریک انصاف کی حکومت نے آئی ایم ایف سے معاہدہ کیا تھا کہ پیٹرولیم مصنوعات پر سبسڈی نہیں دی جائے گی، اس کے علاوہ ان پر فی لیٹر 30 روپے لیوی کے علاوہ جی ایس ٹی بھی وصول کیا جائے گا۔ ہم عمران خان کے بطور وزیر اعظم کئے گئے وعدوں پر عمل کے پابند ہیں۔

شرح نمو سے متعلق سابق وفاقی وزیر اسد عمر کا کہنا تھا کہ اب حکومت کے پاس بیرون قرضہ لینے کے علاوہ کوئی چارہ نہیں، گزشتہ سال کی نسبت رواں سال چاول کی فصل 10 فیصد زیادہ ہوئی، زرمبادلہ ذخائر میں 6 ارب ڈالر کی کمی ہوئی ہے۔ رہنما تحریک انصاف نے بتایا کہ ان دو مہینوں میں روپے کی قیمت میں 15 روپے کمی آئی، اس سال معاشی شرح نمو 6 فیصد تک پہنچے گا، 15 سال میں پہلی بار ہو گا کہ شرح نمو مسلسل دو سال میں 5 فیصد سے زائد ہو گی۔

اسد عمر کا مزید کہنا تھا کہ معاشی ماہرین بتا رہے ہیں سری لنکا کی معیشت جیسی صورتحال سے پاکستان ہفتوں دور ہے۔

دریں اثنا پی بی ایس کے مطابق رواں مالی سال کے دوران بڑے صنعتی اداروں کے شعبہ (ایل ایس ایم) کی شرح نمو 10.9 فیصد بڑھ گئی ۔ ادارہ برائے شماریات پاکستان (پی بی ایس) کے اعدادوشمار میں بتایا گیا ہے کہ گزشتہ مالی سال کےمقابلہ میں جاری مالی سال کے پہلے 9 ماہ کے دوران شعبہ کی شرح ترقی 10 فیصد سے زیادہ رہی ہے جب کہ مارچ 2021 کے مقابلہ میں مارچ2022 کے دوران ایل ایس ایم کی نمو میں 26.9 فیصد بڑھوتری ریکارڈ کی گئی ہے۔

PTI

IMRAN KHAN

Tabool ads will show in this div