پنجاب میں کوئی نو گو ایریا نہیں، رانا ثناء

rana

لاہور:وزیر قانون پنجاب رانا ثناء اللہ نے دعویٰ کیا ہے کہ پنجاب میں کوئی نو گو ایریا نہیں نہ ہی دہشتگردوں کے محفوظ ٹھکانے ہیں ۔ پنجاب میں شروع کیا گیا آپریشن فرد واحد نہیں، سب کا ہے۔ ملک کو دہشتگردی سے پاک کریں گے۔ لاہورمیں پریس کانفرنس کے دوران رانا ثناء اللہ نے کہا کہ پنجاب میں دہشتگردوں اوران کے سہولت کاروں کی بھرپوراندازمیں بیخ کنی کی گئی۔ پنجاب کے 15 ہزار مدارس کی جیو ٹیگنگ کی گئی ہےحکومت کے پاس تمام ترریکارڈ موجود ہے۔ آج ہمیں علم ہے کہ مدرسوں میں کتنے غیر ملکی طالبعلم ہیں۔

مزید پڑھیں: پنجاب میں کوئی نیا آپریشن نہیں ہورہا،رانا ثناء

انہوں نے کہا کہ ضرب عضب اور نیشنل ایکشن پلان سے افواج پاکستان نے وزیرستان سے دہشتگردوں کا نام و نشان مٹایا۔ پنجاب اور دیگرصوبوں میں بھی رینجرز، پولیس اور پاک فوج مشترکہ کارروائیاں کررہے ہیں۔ فورتھ شیڈول میں شامل افراد کی تعداد 1550 ہے جن میں سے ایک ہزار لوگوں کو گرفتارکیا۔ بعض عدالتوں سے ضمانت پر رہا ہوئے اور جن پرجرائم ثابت ہوئے ان کے خلاف مقدمات قائم کیے گئے۔

وزیر قانون نے اپنی پریس کانفرنس میں بتایا کہ پنجاب میں پولیس نے 56 آپریشن کیے ، پاک فوج نے 88 جبکہ کاؤنٹر ٹیررازم ڈیپارٹمنٹ نے گزشتہ 24 گھنٹوں میں 16 آپریشنز کیے۔ آپریشنز کے دوران 5 ہزار 221 افراد کو حراست میں لیاگیا ہے۔ 5 ہزار 5 لوگوں کو کوائف کی تصدیق کے بعد رہا کر دیا گیا جبکہ 216 افراد کو حراست میں رکھا گیا ہے۔

رانا ثناء نے کہا کہ پنجاب میں شروع کیا گیا آپریشن قومی آپریشن ہے جس میں تمام سیاسی قیادت، حکومت ،اپوزیشن ،تمام مذہبی جماعتیں ، ادارے اور قوم شامل ہے۔ سب کا عزم ہے کہ آخری دہشتگرد کے خاتمے تک جنگ جاری رہے گی اور ملک کو دہشتگردی سے پاک کریں گے۔

مزید پڑھیں: وزیراعظم کاجنوبی پنجاب میں دہشتگردوں کےخلاف آپریشن کاحکم

انہوں نے کہا کہ تمام قانون نافذ کرنے والے ادارے قدم سے قدم اور کندھے سے کندھا ملا کرآگے بڑھ رہے ہیں۔ آپریشن اسی جذبے سے جاری گا اور قوم سرخرو ہو گی۔

رانا ثناء اللہ نے پنجاب کے کچے میں بھی بھرپور پریشن شروع کرنے کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ کچے کے علاقے کو کلئیر کریں گے۔ فی الحال پولیس اور ایلیٹ فورس وہاں آپریشن کریں گے۔ اگرضرورت پڑی تو رینجرز اور فوج کی مدد بھی لی جا سکے گی۔

مزید پڑھیں: لاہوردھماکا؛مشترکہ تحقیقاتی ٹیم تشکیل

پریس کانفرنس کے دوران وزیر قانون نے پھر کہا کہ میں دعوے سے کہتا ہوں کہ پنجاب میں دہشتگردوں کے محفوظ ٹھکانے نہیں نہ ہی کوئی نو گو ایریا ہے ۔ کسی کے پاس ثبوت ہے تو ہمیں اس جگہ تک لے جائے۔ فوری طور پر کارروائی کی جائے گی۔

انہوں نے مزید کہا کہ آپریشن میں پہلے بھی کوئی کمی نہیں رکھی لیکن سانحہ لاہور کے بعد وزیراعظم کی ہدایت پراسے مزید تیز کیا جا رہا ہے۔انٹیلیجنس ایجنسیوں کی استعداد مزید بڑھائی جا رہی ہے، وزیراعظم نے بھی ایجنسیوں کو آپس میں روابط مزید مضبوط بنانے کی ہدایت کی ہے۔ سماء

RANA SANA ULLAH

Punjab law minister

lahore blast

no go area

Tabool ads will show in this div