اسلام آباد ہائیکورٹ: پرویز مشرف کی ملٹری کورٹ میں ٹرائل کی درخواست اعتراض لگا کر واپس

Nov 30, -0001

اسٹاف رپورٹ

اسلام آباد : اسلام آباد ہائیکورٹ نے سابق صدر پرویز مشرف کی جانب سے ملٹری کورٹ میں ٹرائل کیلئے دائر درخواست اعتراض لگاکر واپس کردی۔

رجسٹرار آفس نے پرویز مشرف کی جانب سے دائر درخواست پر اعتراض لگایا کہ خصوصی عدالت کے فیصلے کیخلاف اپیل کیلئے ہائیکورٹ درست فورم نہیں لہٰذا درخواست گزار متعلقہ فورم پر رجوع کرے۔

سابق صدر کی جانب سے ڈاکٹر خالد رانجھا ایڈووکیٹ نے درخواست میں مؤقف اختیار کیا تھا کہ خصوصی عدالت نے 21 فروری کو اپنے فیصلے میں کہا کہ ملٹری کورٹ کے پاس پرویز مشرف کے ٹرائل کا اختیار نہیں، عدالت کا یہ فیصلہ خلاف قانون ہے۔

درخواست میں مؤقف اختیار کیا گیا کہ پرویز مشرف نے جب ایمرجنسی لگائی تو وہ اس وقت آرمی چیف تھے لہٰذا خصوصی عدالت پرویز مشرف کا ٹرائل نہیں کرسکتی۔

ہائیکورٹ سے استدعا کی گئی کہ خصوصی عدالت کے فیصلے کو کالعدم قرار دیا جائے اور پرویز مشرف کا ٹرائل ملٹری کورٹ میں کرنے کا حکم دیا جائے۔ سماء

درخواست

missing persons

ہائیکورٹ

envoy

Tabool ads will show in this div