محکمہ خوراک سندھ کی نااہلی، گھوٹکی میں گندم کی 40 ہزار بوریاں سڑ گئیں

Nov 30, -0001

اسٹاف رپورٹ

گھوٹکی : سندھ کے محکمہ خوراک کی نااہلی سے گھوٹکی میں گندم کی 40 ہزار بوریاں سڑ گئیں، انسانی خوراک کا عظیم ذخیرہ اب کیڑوں کا پیٹ بھرنے کے کام آرہا ہے۔

تھرمیں متاثرین کیلئے گندم کا انتظام ہنگامی بنیادوں پر کیا گیا کیونکہ جو گندم سرکاری گوداموں میں دستیاب تھی وہاں تو کیڑے دعوت اڑا رہے تھے۔

گھوٹکی کے سرکاری گودام میں 100 یا 200 نہیں بلکہ پوری 40 ہزار بوری گندم ذخیرہ کی گئی تھی لیکن یہ گندم اب انسانی خوراک کے لائق نہیں رہی۔

شہریوں کا کہنا ہے کہ اس گودام کی  گندم نہ صرف کیڑے کھاچکے ہیں بلکہ بدبو بھی آنے لگی ہے، جس سے بیماریاں پھیلنے کا بھی خطرہ ہے۔

سرکاری گوداموں کی گندم نہ قحط زدگان کے کام آسکی نہ سندھ حکومت اسے فروخت کرکے پیسے کماسکی، ہزاروں کسانوں کی کئی سال کی محنت بھی اہلکاروں کی نااہلی کی نذر ہوکر برباد ہوگئی۔ سماء

سندھ

nigeria