پاکستان کے جنگلات سے جڑی منطقیں

Punjab-Assembly

تحرير:منصور احمد

کافي عرصہ قبل اسمبلي اجلاس سننے کا اتفاق ہواتھا۔ تب اسمبلي پر پڑھے لکھے ہونے کا ليبل نہيں لگا تھا۔ اجلاس کے دوران دو ارکان اسمبلي کے درميان تکرار جاري تھي ايک رکن اسمبلي کہہ رہا تھا کہ پاني سے اتني بجلي نکالني چاہيے يعني اتني بجلي پيدا کرني چاہيے جبکہ دوسرے صاحب کا اصرار تھا کہ اگر پاني سے بجلي نکال لي گئي تو پاني ميں باقي کيا بچے گا۔ يہ انکي سادگي سمجھ ليں يا کم تعليم کا ہونا کہ وہ پاني کو بھي دودھ ہي سمجھ رہے تھے۔ کہ کريم نکل گئي تو باقي کيا بچے گا۔ ايسي سادگي حال ہی میں پنجاب اسمبلي ميں بھي ديکھنے ميں نظر آئي۔ 25جنوري2016 کو اسمبلي نے جنگلات کاٹ کر توانائی منصوبے لگانے کا آرڈيننس جاري کيا۔

آرڈيننس جاري ہونے کے بعد حکومت پر کافي تنقيد ہوئي اور کئي سوالات اٹھائے گئے کہ خيبر پختونخوا ميں تو شجر کاري مہم جاري ہے اور نئے جنگلات لگائے جا رہے ہیں جبکہ پنجاب ميں جنگلات کاٹنے کا آرڈيننس جاري کر ديا گيا ہے۔ جس پر ايک وفاقي وزير کافي سيخ پا بھي ہوئے اور خيبر پختونخوا حکومت اور چيئرمين پي ٹي آئي عمران خان کو مخاطب کرکے کہنے لگے کہ آپ جو پودے لگا رہے ہيں ايک سال بعد ديکھوں گا کہ ان ميں سے کتنے باقی بچتے ہيں۔

۱

بہرحال24 فروري 2016 کو پنجاب اسمبلي نے دوبارہ بنجر اور خالي زمين پر جنگلات لگانے کا بل منظور کيا۔ یعنی پرانے جنگلات کاٹ دو۔ نئے جنگلات لگا دو۔ اس کی مثال بالکل ويسے ہي ہے کہ ماضي بعيد ميں ايک جواں فوج ميں بھرتي ہوا پہلے دن ٹريننگ پرگيا۔ انسٹرکٹر نے پوچھا تم کيا کرتے ہو۔ جوان نے جواب ديا جو آپ حکم کريں کروں گا۔ انسٹرکٹر کے پاس اس دن کوئي کام نہيں تھا وہ کافي دير سوچتا رہا کہ اس سے کيا کام کراوں آخر کہنے لگا جواں ايک گڑھا کھودو۔ جواں نے گڑھا کھودنا شروع کر ديا جب گڑھا کھود چکا تو اس نے انسٹرکٹر سے پوچھا سر مٹي کاکياکرنا ہےاس نےکہا ايک اورگڑھاکھودکراس ميں دبا دو۔ اس نےاس کي مٹي گڑھےميں دبا دي اورپوچھا سراس مٹي کا کياکرنا ہے۔ انسٹرکٹرنےکہا ايک اورگڑھا کھودو۔ وہ بچارا جواں سارادن گڑھےہي کھودتارہا۔بالکل اس طرح کہ پرانے جنگلات کاٹ دو اورنئےجنگلات لگادو،پرانا گڑھا بھردو،نياگڑھا کھودلو۔

۲

دوست کے ساتھ رکن صوبائي اسمبلي کے پاس بيٹھنے کا اتفاق ہوا ميں نےان سےپہلےجنگلات کاٹنے اور نئے لگائے کي وجہ پوچھي اوریہ بھی پوچھا کہ نئے جنگلات تيار ہونےميں تو دس بارہ سال کاعرصہ لگے گا۔ تو انہوں نےميرے سوالات کا جواب دينے کي بجائے اپني ہي منطق شروع کر دي۔ نئےدرخت لگانےسے لکڑي حاصل ہوگي زمين آباد ہوگي۔ صوبے کي آمدني بڑھےگي اور معيشت پراچھا اثرپڑے گا۔

۳

معيشت اچھي ہونےاور آمدني بڑھنے کا سن کرمجھے شيخ صاحب کي کہاني ياد آگئي کہ ايک شيخ نےدوانڈےخريدے اورانہيں سرپرموجود ٹوکري ميں رکھ ليا اوررستے ميں سوچنے لگےکہ انڈوں سےچوزے نکلواوں گا۔چوزےجب بڑے ہوجائيں گےتو ان سےمزيد انڈے،چوزےاورمرغياں حاصل ہونگي۔ پھراس سےپولڑي فارم بناؤں گا۔ پولٹري فارم سے جب آمدني آئےگي۔اس سےزمين خريدوں گا۔ زمين کي آمدني سے بنگلہ بناؤں گا اوربنگلے ميں نوکر چاکررکھونگا۔ جب نوکرمجھ سےپيسےمانگيں گےتو ميں غصےمیں کہوں گا نہيں۔ شيخ صاحب نے جب نہيں کہتے ہوئے گردن ہلائي تو ٹوکري ميں موجود انڈے گرکرٹوٹ گئے اوريوں انکےسارےخواب چکناچورہوگئے۔ کہيں شيخ صاحب کي طرح يہ نہ ہو کہ توانائي منصوبوں کے چکرميں پرانےجنگلات کاٹ ليئےجائيں اورنئے جنگلات لگانےکےبل پرعمل درآمد ہي نہ ہو سکے۔ اور ہم سب ہاتھ ملتے اورسرہلاتےہي رہ جائيں۔

KPK

PUNJAB

PUNJAB ASSEMBLY

tree plantation

Tabool ads will show in this div