جاگ میرے پنجاب، پاکستان جل رہا ہے، بلاول کا بھٹو کی برسی پر خطاب

اسٹاف رپورٹ

گڑھی خدا بخش : پیپلزپارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ جاگ میرے پنجاب پاکستان جل رہا ہے، دہشت گردو سن لو جب تک شہید بی بی کا بیٹا زندہ ہے اقلیتوں کو تنہا مت سمجھنا، دہشتگرد مسلمان نہیں درندے ہیں، طالبان کی سوچ نے جہاد کا معنی بدل کر رکھ دیا، دہشت گرد ہماری پہچان چھیننا چاہتے ہیں، ہماری اپنی جنگ ختم نہیں ہوئی، وفاقی حکومت دوسروں کی جنگ لڑنے جارہی ہے، میاں صاحب آپ کی ٹیم نے مایوس کیا، وقت کے منصفوں نے بھٹو کو تختہ دار پر لٹکایا، بھٹو ظلم کے خلاف آواز تھا۔

گڑھی خدا بخش میں ذوالفقار علی بھٹو کی برسی کے موقع پر جلسہ عام سے خطاب کرتے ہوئے بلاول بھٹو زرداری نے کہا کہ وقت کے منصفوں نے بھٹو کو تختہ دار پر لٹکایا، ہم نے وہ خزانہ لٹادیا جس کے بل پر جینا تھا، معاشرے کے امن کو تباہ کیا گیا، ذات، نسل کے نام پر ہمیں  تقسیم کیا گیا، بھٹو زندہ ہوتا تو کوئی پاکستان کی طرف میلی آنکھ سے نہیں دیکھتا۔

انہوں نے مزید کہا کہ ملک و قوم کو ایک بار پھر بھٹو جیسے مخلص رہنماء کی ضرورت ہے، چند دنوں سے بہت ہی تشویش میں مبتلا ہوں، میاں صاحب آپ کی ٹیم نے بہت مایوس کیا، ڈیڑھ ارب ڈالر پاکستان کی قیمت لگائی جاتی ہے، آپ نے کشکول توڑنے کا وعدہ کیا لیکن بھکاری بنادیا، ہماری فوج غیرت مند ہے، ہماری اپنی جنگ ختم نہیں ہوئی، آپ دوسروں کی جنگ لڑنے جارہے ہیں۔

بلاول کہتے ہیں کہ نواز شریف کی ٹیم نے بینظیر انکم سپورٹ پروگرام کے پیسے روکے، 2018ء تک تھر میں پینے کا صاف پانی ہر گھر میں پہنچائیں گے، لاشوں پر سیاست کا الزام لگانے والے آج بچوں کی لاشوں پر سیاست چمکارہے ہیں، یہ وقت سیاست کرنے کا نہیں ملک کو بچانے کا ہے۔

چیئرمین پی پی پی نے مزید کہا کہ طالبان کی ڈکٹیٹر شپ کے آگے نہیں جھکیں گے، جینا ہے تو سر اٹھا کر جیو، جاگ میرے پنجاب جاگ، میرا پاکستان جل رہا ہے، دہشتگردو سن لو، ابھی شہید ذوالفقار کا نواسہ زندہ ہے، اگر اقلیتوں پر کسی نے حملے کرنے کا سوچا تو وہ اکیلے نہیں جیالے ساتھ ہیں، اقلیتوں کی طرف اٹھنے والی ہر میلی آنکھ کو بلاول بھٹو سے ٹکرانا ہوگا۔

ان کا کہنا ہے کہ سندھ اور پاکستان کو بدنام کرنے کی سازش کامیاب نہیں ہونے دیں گے، طالبان اب ایک نیا دھوکہ دینے جارہے ہیں، وفاق کا پلان سمجھ نہیں آرہا، کبھی ملا محسود کیلئے آنسو بہاتے ہیں کبھی شہید فوجیوں کی تعزیت کرتے ہیں، دہشت گرد مسلمان نہیں درندے ہیں، طالبان کی سوچ نے جہاد کا معنی بدل کر رکھ دیا، یہ جہاد نہیں منافقت ہے۔

بلاول نے کہا کہ پرائیوٹائزیشن کے نام پر ملک بیچنے کی کوشش ہورہی ہے، میاں صاحب آپ کو معلوم ہے تھر، چولستان میں غربت ہے، پاکستان  تاریخ کے ایسے موڑ پر ہے جہاں ہر طرف بے یقینی ہے، دہشتگرد ہم سے ہماری پہچان چھین لینا چاہتے ہیں۔ سماء

Blast

africa

battle

dacoit

Tabool ads will show in this div