لوڈ شیڈنگ کا خاتمہ، اقتدار سنبھالا تو ہوش کیساتھ طوطے بھی اڑ گئے، شہباز شریف

اسٹاف رپورٹ

لاہور : لاہور میں تقریب کے دوران اچانک لوڈ شیڈنگ نے وزیراعلیٰ پنجاب کو بھولے وعدے یاد دلا دیے، شہباز شریف نے اعتراف کیا کہ انتخابی مہم کے دنوں میں لوڈ شیڈنگ  کے خاتمے کیلئے جو دعوے کئے تھے، انہیں فوری پورا کرنا ممکن نہ تھا، اقتدار سنبھالا تو ہوش کے ساتھ طوطے بھی اڑ گئے۔

لاہور کے الحمرا ہال ميں منعقدہ تقريب جب اپنے عروج پر پہنچی تو اچانک بجلی بند ہونے سے ہال ميں اندھيرا چھا گيا اور شرکاء نے شور مچانا شروع کرديا۔

فوری لوڈ شیڈنگ کو ختم کرنا نواز حکومت کے بس میں نہیں  یہ مان کر وزیر اعلیٰ نے صورتحال پر قابو پانے کی کوشش کی۔

انہوں نے کہا کہ الیکشن کے دوران لوڈ شیڈنگ کے خاتمے کے وعدے کئے تاہم جب ہم اقتدار ميں آئے تو پتہ چلا کہ اس کیلئے تو اربوں ڈالرز درکار ہيں، تو ہمارے ہوش بھی اڑ گئے اور طوطے بھی۔

خفت چھپانے کیلئے شہباز شریف  نے روایتی حربہ اپنایا، پیپلزپارٹی کی سابقہ حکومت پر تنقید کی اور لوڈ شیڈنگ کے خاتمے کا عزم دہرایا۔

وزیراعلیٰ پنجاب نے کہا کہ ميں اگلے ماہ اپنے مخالفين کو نندی پور ليکر جاؤٴں گا اور دکھاؤں گا کہ 6 ماہ ميں اس منصوبے سے بجلی پيدا کررہے ہيں اور ميں کہتا ہوں اپنا دور مکمل ہونے تک اس ملک سے اندھيرے ختم کرديں گے۔

تقریب غريب اور بے سہارا خواتين ميں قرضہ حسنہ کی تقسيم کیلئے منعقد کی گئی تھی، جس میں  بتایا گیا کہ روزگار اسکيم کے تحت 3 لاکھ غريب افراد کو 5 ارب 50 کروڑ روپے کے بلا سود قرضے فراہم کئے جارہے ہيں، جس ميں سے 40 فيصد صرف خواتين کو ملیں گے۔ سماء

PPP

ٹویٹر

federer

graves

Tabool ads will show in this div