دوران تفتیش عزیربلوچ کے سنسنی خیزانکشافات

UZAIR BALOCH KHI PKG 31-01 TABISH

کراچی: لیاری گینگ وار کے گرفتار سرغنہ عزیر بلوچ نے دوران تفتیش سنسنی خیز انکشافات کر دیے۔ پیپلزپارٹی پربھتہ خوری،ٹارگٹ کلنگ اورزمینوں پرقبضہ کرانے کیلئے استعمال کرنے کا الزام بھی عائد کردیا۔ عزیربلوچ  نے دوران تفتیش انکشاف کیا کہ پیپلزپارٹی نے جیل میں مجھے گینگسٹرزکا سربراہ مقررکیا اور لیاری کاسردار بنانے کی یقین دہانی کرائی تھی۔

مزید پڑھیے: لیاری گینگ وار کا سرغنہ عزیربلوچ گرفتار

عزیر بلوچ نے اس بات کا اعتراف کیا کہ پیپلز پارٹی کے سرکردہ رہنماؤں نے اسے زمینوں پر قبضے،ٹارگٹ کلنگ اوردیگر جرائم کے لیے استعمال کیا۔

عزیر بلوچ نے بتایا کہ زمینوں پر قبضہ کرنا ہوتا تو مجھے پیغام ملتا کہ '' بندے بھیجو'' جس پر میں اپنے آدمی بھیجتا جو زمینوں پر قبضہ کرلیتے۔ نثارمورائی ، قادر پٹیل بھی فشریز میں ملازمین کو ڈرانے دھمکانے بھتہ وصولی کے لیے استعمال کرتے تھے ۔

مزید پڑھیے: عزیر بلوچ کے پیپلز پارٹی سے گہرے روابط

عزیز بلوچ نے کرپشن میں ملوث بعض رہنماؤں کو بیرون ملک فرار کرانے میں مدد کا اعتراف بھی کیا، عزیر بلوچ نے انکشاف کیا کہ لیاری گینگ وار کے نام پر 10 کروڑ روپے بھتہ وصول کیا جاتا تھا جبکہ فشریزسے بھی باقاعدگی سے بھتہ طلب کیا جاتا تھا۔

مزید پڑھیے: عزیر بلوچ 90 روزہ ریمانڈ پر رینجرز کے حوالے

گینگ وارسرغنہ نے دوران تفتیش یہ بھی بتایا کہ اولڈ سٹی ایریا میں بھتہ جمع کرنے کے لئے دہشت گردی کرکے خوف وہراس پھیلایا جاتا تھا ۔

عزیر بلوچ نے اعتراف کیا کہ لیاری سے الیکشن لڑنے کی دھمکی دے کرمن پسند افراد کو عام انتخابات میں ٹکٹ بھی دلوائے۔

عزیربلوچ نے پیپلز پارٹی کے رہنما خالد شہنشاہ ، گینگسٹرارشد پپو،اسٹیل ملز کے سابق چئیرمین سجاد حسین شاہ سمیت سیکڑوں افراد کے قتل  سے  متعلق بھی انکشافات کیے۔ سماء

LYARI

GANG WAR

lyari gang war

uzair baloch arrested

Tabool ads will show in this div