حکومت اور نظام کا خاتمہ واجب ہوچکا، جلد فائنل کال دونگا، طاہر القادری

ویب ایڈیٹر

راولپنڈی : علامہ ڈاکٹر طاہر القادری کا کہنا ہے کہ موجودہ حکومت عوام کے حقوق پورے نہیں کررہا، وسائل پر چند افراد کا قبضہ ہے، حکومت اور نظام کا خاتمہ واجب ہوچکا، موجودہ نظام حکومت سے خیر کی کوئی توقع نہیں، ملک میں حقیقی جمہوریت چاہتے ہیں، اقتدار ظالم حکمرانوں سے عوام کو منتقل ہوگا، جلد فائنل کال دوں گا۔

پاکستان عوامی تحریک کے سربراہ علامہ ڈاکٹر طاہر القادری نے ویڈیو لنک کے ذریعے بیک وقت کئی شہروں میں اجتماعات سے خطاب کرتے ہوئے آئین کے تحت موجودہ نظام حکومت کا خاتمہ واجب قرار دے دیا، کہتے ہیں کہ اقتدار ظالم حکمرانوں سے عوام کو منتقل ہوگا، ملک میں نظام ہے نہ جمہوریت، وسائل پر چند افراد کا قبضہ ہے، ظلم کی رات ختم ہونے جارہی ہے۔

انہوں نے کہا ہے کہ آج احتجاجی ریلی میں لاکھوں افراد شریک ہیں، آج کے احتجاج کے ذریعے عوام کی طاقت دیکھنا چاہتا تھا، پاکستان کی از سر نو تعمیر کرنے کا وقت آگیا، پورے پنجاب میں بسوں کے اڈے سیل کردیئے ہیں،

اگرعوام ساتھ ہیں تو حکمران بوکھلاہٹ کا شکار کیوں ہیں؟،۔

طاہر القادری کا کہنا ہے کہ لوگوں کے پاس کھانا نہیں، نوکری نہیں، تعلیم نہیں، آئین پاکستان کے تحت نظام کا خاتمہ واجب ہوچکا، موجودہ پارلیمنٹ اور نظام خلاف آئین ہے، ان کے ذریعے تبدیلی یا خیر کی کوئی امید نہیں، پارلیمنٹ میں 75 فیصد لوگ کرپٹ ہیں۔

پی ٹی اے کے سربراہ نے مزید کہا کہ آئین کی دھجیاں بکھیرنے سے پارلیمنٹ وجود میں آئی، عوام سڑکوں پر انقلاب کیلئے نکلے ہیں، احتجاج میں مدرسے کے بچے نہیں، عام افراد شامل ہیں، سفر انقلاب میں عوام نے پہلی فتح حاصل کرلی، جلد ہی پاکستان آکر فائنل کال دوں گا۔

علامہ طاہر القادری کا کہنا ہے کہ ملک میں 50 ہزار جانیں ضائع ہوئیں کس نے استعفیٰ دیا؟، 65 سال سے پسماندگی وہیں کھڑی ہے، لوگوں کے معیار زندگی کو مزید پست کردیا گیا، ایک جانب رائیونڈ کے محل اور پڑوس میں جھگیاں ہیں۔ 

وہ کہتے ہیں کہ پاکستان میں آمریت اور تمام اختیارات وزراء کے پاس ہیں، ایسی جمہوری نظام پر لعنت ہے جہاں لوگوں کو انصاف نہ مل سکے، عوامی نظام میں ہر ڈویژن کو صوبہ بنادیں گے، وزراء عیاشی نہیں کرسکیں گے، 150 ضلعی حکومتیں بنائیں گے، 10 لاکھ افراد کو شریک اقتدار کروں گا، انقلاب کے ذریعے اقتدار نچلی سطح تک منتقل کریں گے۔ سماء

Video

fbi

Tabool ads will show in this div