مشکل وقت ميں يوکرين کوتنہاچھوڑديا گيا،يوکرينی صدر

يوکرين پرروس کے حملے کا دوسرا دن
Feb 25, 2022

يوکرين کے صدرولادمير زيلينسکی کا کہنا ہے کہ وہ ڈٹے رہيں گے کيف نہيں چھوڑيں گے مگر اس بات پر افسوس کا اظہار کيا کہ يوکرين کو تنہا چھوڑ ديا گيا ہے۔

يوکرين کے صدر ولادميرزيلينسکی نے کہا ہے کہ روس کے جنگجو گروہ دارالحکومت ميں داخل ہوچکے ہيں مگروہ کئيف نہيں چھوڑيں گے دشمن کا سامنا کريں گے۔

يوکرين کے وزيرخارجہ دمتروکوليبا نے بمباری کی شديد مذمت کرتے ہوئے کہا کہ نازی جرمنی کے بعد يہ اس شہر پرہولناک ترين حملہ ہے۔ انہوں نے اتحاديوں سے مطالبہ کيا کہ روس کو روکا جائے، ہرجگہ سے نکالاجائے۔

دوسری جانب یوکرین پر روسی حملے کے دوسرے دن دارالحکومت کئيف بم دھماکوں سے لرزاٹھا۔ روسی ميزائل سے جنوب مشرق کی بارڈر پوسٹ تباہ ہوگئی جس میں متعدد فوجی ہلاک ہوگئے۔ يوکرين حکام نے بھی ايک روسی طيارہ مارگرانے کا دعوٰی کيا ہے۔

روس کی وزارت خارجہ کا کہنا ہے کہ 8 سال سے ڈونبيس ميں جو خون بہہ رہا ہے اُسے روکنے کا وقت آچکا ہے۔ ترجمان ماريہ ذخارووا کا کہنا تھا کہ مغرب سالوں سے يوکرين ميں ظلم پرچُپ ہے مگرہم خاموش نہيں رہيں گے۔

امريکا نے کہا ہے کہ يوکرينی مہاجرين کوپناہ دينے کے ليے تيار ہيں مگربہتر يہ ہوگا کہ پڑوسی ممالک مہاجرين کی مدد کريں۔

USA

EUROPEAN UNION

UKRAIN RUSSIA DISPUTE

Tabool ads will show in this div