سکھر:گاؤں خميسو ميں دلہے کو پرکھنے کاانوکھا انداز

شادی سے پہلے لڑکا کرتا ہے لڑکی والوں کی خدمت

سکھر کے گاؤں خميسو ميں صديوں سے يہی رواج چل رہا ہے جہاں دلہے کو شادی سے ايک ماہ پہلے تک لڑکی والوں کی خدمت کرنا پڑتی ہے۔

جوگيوں کے 7قبيلے 400سال سے يہی رسم منارہے ہيں جس میں شادی سے پہلے لڑکا لڑکی والوں کی خدمت کرتا ہے، دل جيت ليا تو رشتہ پکا  ہار گيا تو بات ختم۔ شادی کرنی ہے تو لڑکے کو کڑا امتحان دينا پڑے گا، گاوں خميسو ميں صديوں سے يہی رواج چل رہا ہے۔

جوگيوں کے 7 قبيلے 400 سال سے يہی رسم منارہے ہيں۔ سکھر، خيرپور، شکارپور، جيکب آباد کے کئی علاقوں ميں دلہے کو پرکھنے کا يہی واحد راستہ ہے۔ منگنی سے شادی تک لڑکے والا لڑکی کی شکل ديکھ سکتا ہے نہ ہی بات کی اجازت ہے۔

ایک نوجوان عطا اللہ ايک ماہ تک لڑکی کے گھر رکا۔ پہلے اينٹيں بنائيں، پھر 15 دن کھيتی باڑی کيں۔ کہتے ہیں خدمت گزاری کی يہ رسم نئی نہيں، مجھ سمیت جوگی خاندان کا ہر فرد اس سے گزرا ہے۔

جوگيوں کا ماننا ہے کہ صديوں پہلے شروع ہونے والی يہ رسم انکی بيٹيوں کے رشتے اور مستقبل بچارہی ہے کیونکہ ان کے قبیلے میں شادياں ٹوٹنے يا پھر طلاق کا تناسب تقريباً صفر ہے۔

SUKKUR

Unique way

جوگيوں کے 7قبيلے

Tabool ads will show in this div