پنجگوراور نوشکی میں کلیئرنس آپریشن مکمل، 20دہشتگرد ہلاک، پاک فوج

افسران سمیت 9 جوان شہید ہوئے، آئی ایس پی آر

سیکیورٹی فورسز نے پنجگور اور نوشکی میں کلئیرنس آپریشن مکمل کرلئے۔ آئی ایس پی آر کے مطابق کارروائیوں میں کمانڈروں اور انتہائی مطلوب ملزمان سمیت 20 دہشت گرد مارے گئے جبکہ ایک افسران سمیت 9 سیکیورٹی اہلکاروں نے جام شہادت نوش کیا۔

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) سے جاری تفصیلات کے مطابق دہشت گردوں نے 2 فروری کی رات بلوچستان کے علاقوں نوشکی اور پنجگور میں فورسز کے کیمپوں پر حملے کئے تھے۔

ترجمان پاک فوج کے مطابق سیکیورٹی فورسز نے بھرپور جوابی کارروائی کرکے دونوں مقامات پر حملے ناکام بنائے، حملوں کے بعد شروع کئے گئے کلیئرنس آپریشنز میں تین کمانڈروں سمیت 20 دہشتگرد ہلاک کردیئے گئے۔

مزید جانیے: پنجگوراورنوشکی حملے:وزارت داخلہ نے ملک بھرمیں الرٹ جاری

آئی ایس پی آر نے تفصیلات میں بتایا ہے کہ نوشکی میں آپریشن کے دوران 9 دہشت گرد مارے گئے جبکہ ایک افسر سمیت 4 سیکیورٹی اہلکار دہشت گردوں کا حملہ پسپا کرتے ہوئے شہید ہوئے۔

ترجمان پاک فوج کا کہنا ہے کہ پنجگور میں سیکیورٹی فورسز نے شدید مقابلے کے بعد دہشت گردوں کا حملہ ناکام بنایا، سیکیورٹی فورسز نے کلیئرنس آپریشن کے دوران دہشت گردوں کو ٹھکانے لگایا، سیکیورٹی فورسز نے پنجگور میں بھاگنے والے 4 دہشتگردوں کو گھیرے میں لیا، تمام دہشت گرد آج آپریشن کے دوران مارے گئے ہیں، حملوں سے متعلقہ 3 دہشت گرد گزشتہ روز مارے گئے تھے، ان میں 2 انتہائی مطلوب دہشت گرد کمانڈر بھی شامل تھے۔

تفصیلات جانیے: پنجگور اور نوشکی میں حملہ، 15 دہشت گرد ہلاک

آئی ایس پی آر کا کہنا ہے کہ پنجگور آپریشن کے دوران ایک جے سی او سمیت 5 جوان شہید جبکہ 6 زخمی ہوئے، پنجگور میں فالو اپ آپریشن 72 گھنٹے جاری رہا۔

ترجمان پاک فوج نے بتایا کہ دہشت گردوں کے قبضے سے بھاری مقدار میں اسلحہ و گولہ بارود برآمد کرلیا گیا ہے۔ آئی ایس پی آر کا کہنا ہے کہ سیکیورٹی فورسز دہشت گردی کے خاتمے کیلئے پُرعزم ہیں اور ہر قیمت پر اپنی سرزمین سے دہشت گردوں کا خاتمہ یقینی بنایا جائے گا۔

Panjgur

noshki

نوشکی

پنجگور

دہشت گرد حملہ

Tabool ads will show in this div