جب روینہ ٹنڈن نے نوازشریف کو بم بھیجا

اداکارہ نے برسوں بعدکیا کہا؟

تصویر: ہندوستان ٹائمز

کم ہی لوگوں کو یہ علم ہوگا کہ سال 1999 میں کارگل جنگ کے دوران ایک تصویر سے یہ خبرسامنے آئی کہ بالی ووڈ اداکارہ روینہ ٹنڈن نے اس وقت کے پاکستانی وزیراعظم نواز شریف کو ایک تحفہ بھیجا ہے۔

سوشل میڈیا پراکثروبیشتر ایک تصویر وائرل ہوتی ہے جس میں ایک بم پر' روینہ ٹنڈن کی جانب سے نوازشریف کے لیے' کے الفاظ درج ہیں۔

بھارتی میڈیا کے مطابق روینہ ٹنڈن کو نوازشریف کی پسندیدہ اداکارہ کہاجاتا تھا، یہی وجہ ہے کہ کارگل جنگ کے دوران چند شرارتی سپاہیوں نے سابق وزیراعظم کو ایک بم بطورتحفہ بھیجنے کا فیصلہ کیا جس پر دونوں کا نام لکھا تھا۔

ہندوستان ٹائمز کی مینیجنگ ایڈیٹر(انٹرٹینمنٹ اینڈ لائف اسٹائل)سونل کالرا سے ٹوئٹراسپیس میں بات کرنے والی روینہ نے اس واقعے کے تناظرمیں امن پسندانہ رویہ اپناتے ہوئے بتایا کہ انہیں خود بھی کافی عرصے بعد ایسے کسی بم کا علم ہوا تھا جو خود اُن کی طرف سے نواز شریف کوبھیجا جانا تھا۔

روینہ کے مطابق ، ' میں پوری دنیا کو یہ نصیحت کروں گی کہ اگر کوئی معاملہ پیار اوربات چیت سے حل ہوسکتا ہے تو ضرورکریں، خون کا رنگ ادھربھی لال ہے اور اُدھربھی،کسی کو بھی کسی ماں کا بیٹا یا بیٹی کھونے پرفخرمحسوس نہیں کرنا چاہیے'۔

اداکارہ نے مزید کہا کہ، 'اگر مجھے اپنے ملک کی حفاظت کیلئے سرحد پرکھڑا ہونا پڑے تو میرے ہاتھ میں بھی بندوق دے دیں، میں کھڑی ہو جاؤں گی '۔

ہندوستان ٹائمزکو دیے جانے والے انٹرویو میں روینہ نے سیاست میں آنے سے متعلق خیالات، بالی ووڈ میں بطور خاتون اداکاردرپیش مشکلات، فیملی سپورٹ اور بہت سے دیگر حوالوں سے بات کی۔ مکمل انٹرویو آپ یہاں پڑھ سکتے ہیں۔

روینہ کو آخری بارینیٹ فلکس سیریز آرانیک میں دیکھا گیا تھا، جس میں انہوں نے سیریل کلرکا پیچھا کرنے والی ایس ایچ او کستوری ڈوگرا کا کردارادا کیاتھا۔

اداکارہ کے آنے والے پراجیکٹس میں سنجے دت کے ساتھ فلم ' کے جی ایف چیپٹر2 شامل ہے جس میں سنجے ولن اور روینہ وزیراعظم کے کردارمیں نظرآئیں گے۔

Tabool ads will show in this div