کراچی: جےیو آئی سندھ کے جنرل سیکریٹری پر قاتلانہ حملہ

حفظ احمد علی حملے میں محفوظ

HAFIZ AHMED Still 23-01

[video width="640" height="360" mp4="https://i.samaa.tv/wp-content/uploads/sites/11//usr/nfs/sestore3/samaa/vodstore/urdu-digital-library/2020/01/HAFIZ-AHMED-Still-23-01.mp4"][/video]

نارتھ کراچی میں جمعیت علماء اسلام سندھ کے جنرل سيکريٹری پر قاتلہ حملہ ہوا تاہم حافظ احمد علی محفوظ رہے جبکہ واقعے کی سی سی ٹی وی فوٹيج سامنے آگئی۔

ترجمان حافظ احمد کے مطابق واقعہ گزشتہ رات بارہ بجکر پانچ منٹ پر پیش آیا، جب حافظ احمد دوا لیکر گھر پہنچے ہی تھے کہ موٹر سائيکل پر سوار تين ملزمان پيچھا کرتے ہوئے ائتے اور تین فائر کیے۔

حافظ احمد کے سیکيورٹی گارڈز کی جوابی فائرنگ سے ملزمان فرار ہوگئے۔

ترجمان احمد علی نے دعویٰ کیا کہ سیکیورٹی گارڈز نے ایک ملزم کو پکڑ لیا تھا لیکن ملزمان اپنے ساتھی کو چھڑا کر اپنی پسٹل اور موٹر سائیکل چھوڑ کر فرار ہوئے۔

پولیس کا کہنا ہے ممکن ہے کہ ملزمان لوٹ مار کی واردات کے لیے آئے ہوں، ملزمان جو موٹر سائيکل چھوڑ کر فرار ہوئے وہ سرجانی سے چوری کی گئی ہے، واقعہ کا مقدمہ اجمیر نگری تھانے میں درج کیا جا رہا ہے۔

Tabool ads will show in this div