تھر کا دروازہ۔۔۔ نوکوٹ قلعہ

تاریخی قلعہ حکومتی توجہ کا منتظر
Jan 21, 2022

[video width="640" height="360" mp4="https://i.samaa.tv/wp-content/uploads/sites/11//usr/nfs/sestore3/samaa/vodstore/urdu-digital-library/2020/01/Naukot-Naya-Din.mp4"][/video]

تھر کا دروازہ۔۔۔ نوکوٹ قلعہ

تھرپارکر میں نوکوٹ، صحرائے تھر کے داخلی راستے پر قائم ہے، جس کی وجہ سے اسے ’’تھر کا دروازہ‘‘ کہا جاتا ہے۔ نوکوٹ شہر، میر پورخاص سے تقریباً 75کلومیٹر کے فاصلے پر واقع ہے ۔
تھر پارکرکی تہذیب و تمدن کی عکاسی کرتا یہ قلعہ 1789ء میں میر شیر محمد تالپور کے والد میر علی مراد خان تالپور نے تعمیر کروایا تھا جس کا مقصد سرکشوں اور انگریزوں سے اس شہر کا دفاع کرنا تھا۔
قلعے کی لمبائی تقریباً 640فٹ اور چوڑائی 440فٹ ہے جس کی تعمیر پر تقریباً 8 لاکھ روپے سے زیادہ لاگت آئی تھی۔
تاہم حکومت کی عدم توجہ کے باعث قلعہ کے اندرونی حصے کی دیواروں میں دراڑیں آگئی ہیں اور میروں کے محلات اور بارہ دری سمیت دیگر حصہ منہدم ہوگیا ہے۔
اس خوبصورت قلعہ کی نو برجیں ہیں، دو مرکزی دروازے ، تین برج شمال، جنوب اور مغربی دیوار کے بیچ میں ہیں۔
قلعہ نوکوٹ کے بارے میں کہا جاتا تھا کہ چھوٹا موٹا حملہ اس کا کچھ نہیں بگاڑ سکتا، تاہم تاریخی ورثے کو اس کی اصل حالت میں برقرار رکھنے کیلئے اقدامات نہ کیے گئے تو انتظامیہ کی عدم توجہ اسے مٹا دے گی۔

Tabool ads will show in this div