مظفرآباد:ڈرائيونگ سيکھنےوالے لڑکے اور لڑکی پرتشدد،ملزمان گرفتار

لڑکا اور لڑکی سیاح نہیں بلکہ مقامی ہے،پوليس حکام
Jan 19, 2022

[video width="640" height="360" mp4="https://i.samaa.tv/wp-content/uploads/sites/11//usr/nfs/sestore3/samaa/vodstore/urdu-digital-library/2020/01/AJK-Couple-Torture-CASE-2100-New-PKG-19-01-AbD.mp4"][/video]

آزادکشمير کے دارالحکومت مظفرآباد ميں ڈرائيونگ سيکھنے والے لڑکے اور لڑکی پر تشدد کرنے والے تين ملزمان کو پوليس نے گرفتار کرليا۔

مظفرآباد کے علاقے لنگرپورہ ميں ڈرائيونگ سيکھنے کيلئے جانے والے لڑکے اور لڑکی کو ملزمان نے مارا پيٹا، خاتون کو تھپڑ مارے، موبائل چھينے اور پيسوں کا تقاضہ بھی کرتے رہے۔

واقعے کی ويڈيوشل ميڈيا پروائرل ہونے کے بعد پوليس نے ملزمان کوگرفتارکرکےمزيد تفتيش کيلئے عدالت سے ايک ہفتے کا ريمانڈ لے ليا۔

ایس ایچ او راشد حبیب مسعودی کا کہنا ہے کہ تین دن پہلے سوشل میڈیا پر ویڈیو وائرل ہونے کے بعد آزادکشمیر کے انسپکٹر جنرل پولیس نے نوٹس لے کر ہدایت کی کہ ملزمان کو گرفتار کیا جائے جس پر سٹی پولیس مظفرآباد نے ملزمان کو گرفتار کرکے مقدمہ درج کرلیا۔

راشد حبیب مسعودی کا کہنا تھا کہ ملزمان نے گاڑی میں موجود لڑکے اور لڑکی پر تشدد کیا، گالم گلوچ اور دست درازی کی۔ انہوں نے کہا کہ دوران تفتیش ملزمان سے چھینے گئے موبائل بھی برآمد کرلیے گئے ہیں۔

پولیس کا کہنا ہے کہ يہ تاثرغلط ہے کہ دونوں افراد غيرمقامی اور سياحت کيلئے يہاں آئے تھے۔انہوں نے کہا کہ سیٹلائیٹ ٹاؤن لنگر پورہ کھلی جگہ ہے جہاں آہستہ آہستہ ڈویلپمنٹ ہورہی ہے زیادہ تر لوگ وہاں ڈرائیونگ سیکھنے کیلئے جاتے ہیں یہ لڑکی لڑکا وہاں موجود تھے لیکن یہ ٹوریسٹ نہیں مقامی ہیں۔

پوليس حکام کا کہنا ہے کہ کسی کو قانون ہاتھ ميں لينے کی اجازت نہيں ملزمان کو قرار واقعی سزادی جائے گی۔