کووڈ بھارت میں 31سال سے موجود ہے،اے ایف پی رپورٹ

یہ کیسے ممکن ہوا جانیے ایک دلچسپ حقیقت

سوشل میڈیا پر وائرل ہونے والی ایک اطلاع کے بعد اسے پڑھنے والوں کے ذہن میں غالباً یہ جملہ ضرور آتا ہوگا کہ "ہیں، کیا کووڈ بھارت میں 31 سال سے موجود ہے؟" جی ہاں، ویسے یہ ایک حقیقت بھی ہے، آئیے ہم یہ بات ثابت کر کے دکھاتے ہیں۔

گو دنیا کی اب تک کی معلومات کے لحاظ سے کووڈ کی ابتداء چین کے شہر ووہان سے ہوئی جہاں سے اس نے دنیا بھر کا رخ کیا لیکن اب ایک بات اور پتہ چلی ہے کہ کووڈ تین دہائیوں پہلے بھارت میں پیدا ہوا اور کبھی کبھار بیرونی دنیا کا رخ بھی کرلیتا ہے۔

بات کچھ یوں ہے کہ یہ کوئی وائرس نہیں بلکہ ایک بھارتی شہری کا نام ہے۔ گو یہ ہے تو بامعنی لیکن ہندی یا سنسکرت زبان جانے والے بہت سے افراد اس لفظ کے معنیٰ سے واقف نہیں اور یہ سن کر وہ بھی اچنبھے کا شکار ہیں۔

فرانسیسی نیوز ایجنسی اے ایف پی کی ایک رپورٹ کے مطابق بنگلور سے تعلق رکھنے والے ایک 31 سالہ بزنس مین کا نام کووڈ کپور ہے جنہیں خود بھی بخوبی احساس ہے کہ ملک اور بیرون ملک جو بھی ان کے نام سے آشنا ہوتا ہے ورطہ حیرت میں پڑجاتا ہے۔

کووڈ کپور نے اپنے ٹویٹر پروفائل پر بھی لکھا ہوا ہے کہ ان کا نام کووڈ ضرور ہے لیکن وہ کوئی وائرس نہیں ہیں۔ حال ہی میں اپنی ایک پوسٹ میں انہوں نے بتایا کہ جب انہوں نے کووڈ 19 وباء شروع ہوجانے کے بعد پہلی بار بیرون ملک دورہ کیا تو بہت سے لوگ ان کا نام سن کر حیران ہوئے۔

گو بھارت میں یہ نام کوئی اتنا عام نہیں اور شاید ہی بہت تھوڑے لوگ اس نام سے پکارے جاتے ہوں لیکن یقیناً یہ کووڈ کپور کو آج کے ڈیجیٹل دور میں سوشل میڈیا کے ذریعے بے پناہ شہرت کے حصول کا باعث ضرور بن چکا ہے۔

کووڈ کپور کی والدہ نے اس نام کا انتخاب اپنے بچے کی پیدائش سے پہلے ہی کرلیا تھا۔ جہاں تک اس لفظ کے لغوی معنیٰ کا تعلق ہے اس سے مراد عالم یا ایسا شخص ہے جو ہندی یا سنسکرت زبان سیکھ رہا ہوں۔

ایک ٹویٹ میں کووڈ کا کہنا تھا کہ مستقبل میں ان کے غیر ملکی دورے پر لطف ہوں گے۔ ان کے اس ٹویٹ کو کافی پذیرائی ملی جس کا اندازہ اس بات سے لگایا جاسکتا ہے کہ اسے 40 ہزار لائکس ملے اور 4 ہزار ٹویٹر صارفین نے اسے ری ٹویٹ کیا۔ مذکورہ پوسٹ کے جواب میں بے شمار لطیفے، میمز، پیغامات اور انٹرویو کی درخواستیں آئیں جو بھارت میں اومی کرون کے بڑھتے کیسز اور وباء کے گھٹن زدہ ماحول میں تازہ ہوا کا ایک جھونکا تھا۔

کووڈ کپور کا اپنے بارے میں ایک اور دلچسپ تبصرہ یہ ہے کہ 'وہ 1990 سے کووڈ پازیٹو تھے' جبکہ انہوں نے ایک تصویر بھی پوسٹ کی جس میں انہوں نے کرونا بیئر پکڑی ہوئی تھی۔

کووڈ کے لیے اچانک سے اتنی توجہ کا حصول ایک دلچسپ و خوشگوار تجربہ تو ہے ہی لیکن اس کے علاوہ وہ یہ توقع بھی کر رہے ہیں کہ اس سے ان کے کاروبار کو بھی تشہیر ملے گی۔

Tabool ads will show in this div