کم عمرہارس رائیڈربلندحوصلےکی اعلیٰ مثال بن گئی

مستقبل میں فائٹر پائلٹ بننے کی خواہش ہے
Jan 07, 2022
[video width="640" height="360" mp4="https://i.samaa.tv/wp-content/uploads/sites/11//usr/nfs/sestore3/samaa/vodstore/urdu-digital-library/2020/01/YOUNGEST-HORSE-RIDER-LHR-PKG-06-01.mp4"][/video]

پاکستان کی کم عمر ترین ہارس رائیڈر 7 سالہ عنایا ڈار  بلند حوصلے اور عزم کی اعلیٰ مثال بن گئی۔

کم عمر عنایا نے ہارس جمپنگ جیسے خطرناک کھیل کا نہ صرف آغاز کردیا بلکہ کم عمری میں ہی ٹائٹل بھی اپنے نام کرنا شروع کردئیے۔

اس نے اب گھڑ سواری سے جڑے دیگر کھیل نیزہ بازی،ماؤنٹینٹڈ آرچری میں مہارت کو اپنا ہدف بنا لیا۔

سماء سےبات کرتے ہوئے عنایا نے بتایا کہ مستقبل میں فائٹر پائلٹ بننا ہے اور گھڑ سواری کے کھیل میں پاکستان کا پرچم دنیا میں بلند بھی کرنا ہے۔

Tabool ads will show in this div