فیصل آباد:خواتین میں جرائم کی شرح بڑھ گئی،100اشتہاری قرار

سال 2021 میں خواتین کی کارروائیاں15فیصد بڑھیں

فیصل آباد میں عورتوں کا جرائم میں ملوث ہونے کا گراف بھی بڑھنے لگا جس کا اندازہ سال 2021ء کے اعداد و شمار سے لگایا جاسکتا ہے، جس کے مطابق چوری، اغوا اور منیشات فروشی سمیت دیگر سنگین وارداتوں میں خواتین کی شمولیت پہلے سے 15 فیصد زیادہ رہی۔

پولیس کے مطابق جرائم پیشہ خواتین میں سے کچھ نے کسی دکان پر ہاتھ صاف کیا تو کسی نے گھر میں نقب لگائی، پولیس ریکارڈ کے مطابق سب سے زیادہ 48 خواتین چوری کی واردتوں میں ملوث پائی گئیں۔

سال 2021 میں 149 جرائم پیشہ خواتین کے خلاف چوری، لوٹ مار، اغوا، منشیات فروشی سمیت دیگر جرائم کے مقدمات درج ہوئے جو گزشتہ برس سے 15 فیصد زیادہ ہے، رواں سال 100 سے زائد جرائم پیشہ خواتین اشتہاری قرار پائیں۔

اس حوالے سے ایک خاتون وکیل کا کہنا تھاکہ خواتین ہونے کا فائدہ اٹھاتے ہوئے جرم کیا جاتا ہے، لہٰذا کارروائی تو ہونی چاہئے۔

سٹی پولیس آفیسر مبشر میکن نے بتایا کہ پولیس خواتین ملزمان کیلئے تھوڑا نرم رویہ رکھتی ہے اور کوشش یہی ہوتی ہے کہ جرائم پیشہ خواتین کیخلاف لیڈی پولیس کی مدد سے کارروائی کی جائے۔

Tabool ads will show in this div