سوات: ہینڈی کرافٹس کا کاروبار ماند کیوں پڑگیا؟   

جانیے اس فن سے وابستہ افراد کی کا احوال 

[video width="640" height="360" mp4="https://i.samaa.tv/wp-content/uploads/sites/11//usr/nfs/sestore3/samaa/vodstore/urdu-digital-library/2020/12/SM-SWAT-HANDICRAFTS-BUSINESS-PKG-KAZIM-21-12.mp4"][/video]

وادی سوات ميں سن 2007 سے پہلے قدیم لکڑی سے بنے فرنیچر اور برتنوں کا کاروبار عروج پر تھا تاہم اب وہاں صدیوں پرانے ہینڈی کرافٹس کا کاروبار اب ماند پڑ گیا ہے۔ 

غيرملکی سياحوں کی آمد متاثر ہوئی تو ہینڈی کرافٹس کا کاروبار بھی ماند پڑگیا اور اب صورتحال یہ ہے کہ ہنر مند افراد اپنا کام بيچنے کے ليےغيرملکی سیاحوں کے منتظر ہيں-   

ہینڈی کرافٹس کے کاروبار سے وابسطہ ایک تاجر حسن خان کا کہنا ہے کہ یہ ان کے اباؤاجداد کا کاروبار ہے جو وہ سن 70 کی دہائی سے کرتے چلے آ رہے ہیں۔ ان کا مزید کہنا ہے کہ سن 2007 کی صورتحال سے پہلے جب یہاں بیرونی سیاح آتھے تھے تو یہ کاروبار بہت اچھا تھا لیکن اب تنزلی کا شکار ہے۔ 

تاجروں کا کہنا ہے کہ کاروباری مندی کی وجہ سے لاکھوں روپے مالیت کا قیمتی سامان گوداموں ميں پڑے پڑے خراب ہورہا ہے۔ انہوں نے بتایا کہ ان کے پاس بہت ساری چیزیں رکھی ہیں اگر حکومت ان کی نمائش کرانے میں مدد کرے تو ان کا یہ کاروبار دوبارہ چل سکتا ہے۔ 

سوات میں ہینڈی کرافٹس کے شعبے میں ترقی کے بے پناہ مواقع موجود ہیں اگر بیرون ممالک سے کاروباری افراد کو یہاں لانے کے لیے اقدامات کیے جائیں تو یہ  کاروبار دوبارہ پروان چڑھ سکتا ہے۔ 

Tabool ads will show in this div