پی آئی اے کا پائلٹس کی تربیت کیلئے اہم اقدام

قومی ایئرلائن نے برطانویہ سے سیمولیٹر حاصل کرلیا

قومی ایئرلائن کے پائلٹس کی تربيت اب پاکستان ميں ہی ہوگی، پاکستان انٹرنیشنل ایئرلائنز نے برطانیہ سے سیمولیٹر حاصل کرلیا، 300 ڈالر فی گھنٹہ سے زائد کی بچت ہوگی۔

پائلٹس کی تربیت، ریفریشر کورسز اور ایئر سیفٹی کیلئے جدید ترین سیمولیٹر خطے میں سب سے پہلے پاکستان میں لگے گا۔ قومی ایئرلائن اور برطانوی کمپنی ایل تھری ہیرس کے مابین معاہدہ طے پاگیا۔

برطانوی ہائی کمشنر نے سیمولیٹر کو پاکستانی پائلٹس کی بہتر تربیت کیلئے اہم قدم قرار دیدیا۔

کرسچن ٹرنر کا کہنا ہے کہ پاکستان اور برطانیہ کی دوستی بھی آگے بڑھے گی۔

چیف ایگزیکٹو آفیسر پی آئی اے نے کہا کہ سیمولیٹر سے مالی وسائل کی بڑی بچت  ہوگی، سیمولیٹر کمپلیکس میں ایئربس 320 کے علاوہ، بوئنگ 747 اور بوئنگ 777 کے سیمولیٹر بھی نصب کئے جائیں گے۔

ائیرمارشل ارشد ملک کا کہنا ہے کہ یہ ایک مکمل پیکیج ہوگا جس کا ناصرف پی آئی اے بلکہ نجی فضائی کمپنیوں کو بھی فائدہ ہوگا، خطے کے دوسرے ملک بھی اس جدید سہولت سے فائدہ اٹھاسکیں گے۔

اس سے قبل ائیربس 320 کے 670 پائلٹس، سول ایوی ایشن انسپکٹر کے ہمراہ تربیت کیلئے بیرون ملک جاتے تھے، ہر پائلٹ کی تربیت کا نرخ تقریباً 300 ڈالر فی گھنٹہ تھا، اب ٹکٹس، رہائش اور یومیہ الاؤنس سمیت کثیر زرمبادلہ کی بچت ہوگی۔

Tabool ads will show in this div