اومی کرون کی مشتبہ مریضہ میں 3تغیرات پائےگئے، ڈاکٹر فیصل

مکمل تصدیق ہونے میں ایک ہفتہ لگے گا
Dec 10, 2021

Omicron Covid

[video width="640" height="360" mp4="https://i.samaa.tv/wp-content/uploads/sites/11//usr/nfs/sestore3/samaa/vodstore/urdu-digital-library/2020/12/Omicron.mp4"][/video]

آغا خان یونیورسٹی ہسپتال کے ماہر ڈاکٹر فیصل محمود کا کہنا ہے کہ کراچی میں اومیکرون کی مشتبہ مریضہ میں کرونا کی عام قسمیں الفا، بیٹا، گاما اور ڈیلٹا نہیں پائی گئی تھیں جبکہ نئے ویرینٹ میں تین تغیرات پائے گئے ہیں۔

پروگرام نیا دن میں گفتگو کرتے ہوئے ڈاکٹر فیصل محمود نے کہا کہ خاتون کے نمونوں میں تین تغیرات پائے گئے ہیں لیکن مکمل طور پر تصدیق ہونے میں ایک ہفتہ لگے گا۔

انہوں نے کہا کہ اومیکرون ویکسین شدہ افراد کو بھی متاثر کر سکتا ہے لیکن یہ ویکسین کرونا یا کسی دوسری بیماری سے بچاتا ہے۔

ڈاکٹر فیصل نے کہا کہ ’’ہم نے اپنی معمول کی جانچ میں اس کیس کا پتہ لگایا لیکن علامات بہت معمولی تھے۔

ماہرین کہہ چکے ہیں کہ اومیکرون انتہائی متعدی ہے لیکن خطرناک نہیں ہے اور لوگوں کو گھبرانا یا افواہوں پر یقین نہیں کرنا چاہیے۔

ڈاکٹروں نے لوگوں پر زور دیا ہے کہ وہ احتیاطی تدابیر اپناتے رہیں کیونکہ اومیکرون کی انفیکشن کی بلند شرح عالمی سطح پر تشویش کا باعث بنی ہوئی ہے۔

OMICRON

DR FAISAL MAHMOOD

Tabool ads will show in this div