سعودی عرب: ویژن 2030 کےتحت اہم عہدےپر خاتون مشیرمقرر

فیصلے کا مقصد سعودی خواتین کو بااختیار بنانا ہے،حکام

سعودی عرب کے ٹیکنیکل اینڈ ووکیشنل ٹریننگ کارپوریشن کے گورنر ڈاکٹر احمد الفحید نے ایک اعلامیہ جاری کیا جس میں ھیفا خیران الصقر کو گورنر کے دفتر میں بطور مشیر کام کرنے کی ذمہ داری سونپی گئی ہے۔

عرب میڈیا کے مطابق یہ فیصلہ ویژن 2030 کے اہداف کے حصول کے لیے کیا گیا جو جس کا مقصد سعودی خواتین کو بااختیار بنانا اور لیبر مارکیٹ میں ان کی شرکت کو فروغ دینا ہے۔

حالیہ دنوں میں خادم حرمین شریفین شاہ سلمان بن عبدالعزیز اور ولی عہد کی حکومت کی طرف سے جاری کردہ بہت سے فیصلوں، قانون سازی اور ضوابط کے اجراء کی بدولت سعودی خواتین کو بااختیار بنانے کے اقدامات میں تیزی آئی ہے۔

اقدامات کا مقصد معاشرے میں خواتین کی اہمیت کو بڑھانا اور انہیں قومی ترقی کے تمام شعبوں اقتصادی، سماجی، سائنسی، ثقافتی اور تمام سطحوں پر ان کی صلاحیتوں کو بروئے کار لاکر ان کے کام کے اختیارات کو وسعت دینے، خواتین کے لیے یکساں مواقع کو یقینی بنانے کے لیے سرکاری اداروں میں اعلیٰ قیادت کے عہدوں کو سنبھالنے میں خواتین کی شرکت کو یقینی بنانا ہے۔

واضح رہے کہ ھیفا خیران الصقر کے پاس اپنے پیشے کا کافی تجربہ ہے۔ وہ تبوک میں ٹیکنیکل اینڈ ووکیشنل ٹریننگ کی جنرل ایڈمنسٹریشن کے اسسٹنٹ ڈائریکٹر جنرل، تبوک میں لڑکیوں کے ٹیکنیکل کالج کے ڈین اور تربیتی امور کے نائب سمیت کئی عہدوں پر فائز رہ چکی ہیں۔

Female Advisor

Tabool ads will show in this div