کراچی:چڑیاگھرکےسفیدشیرکی موت،سینئر ڈائریکٹرکراچی زوعہدےسے برطرف

منصور قاضی کو کراچی چڑیا گھر کے سینئر ڈائریکٹر کا چارج دینے کا نوٹیفیکیشن جاری

کراچی کے چڑیا گھر میں سفید شیر کی موت کے بعد سینئر ڈائریکٹر کراچی زو خالد ہاشمی کوعہدے سے ہٹا دیا گیا ہے۔

میٹروپولیٹن کمشنرافضل زیدی نےخالد ہاشمی کی برطرفی کے احکامات جاری کردئیے ہیں۔ ان کی جگہ منصور قاضی کو کراچی چڑیا گھر کے سینئر ڈائریکٹر کا چارج دینے کا نوٹیفیکیشن جاری کردیا گیا ہے۔

نوٹیفکیشن میں بتایا گیا ہے کہ منصور قاضی کی تعیناتی عارضی طور پر کی گئی ہے۔منصور قاضی اس سے قبل بھی سینئر ڈائریکٹر کراچی زو تعینات رہ چکے ہیں۔

کراچی چڑیا گھرکابوڑھا ببرشیر ابدی نیند سوگیا

بدھ کو ترجمان بلدیہ عظمیٰ کراچی علی حسن ساجد نے بتایا تھا کہ کراچی چڑیا گھر میں سفیر شیر 13 روز بیمار رہنے کے بعد انتقال کرگیا۔ بیمار شیر کا علاج بھی جاری تھا۔ ترجمان نے بتایا کہ شیر کو پھیپھڑوں کا مرض لاحق تھا، اس کے پھیپھڑوں نے کام کرنا چھوڑ دیا تھا۔نایاب نسل کا سفید شیر 2012ء میں افریقا سے کراچی چڑیا گھر لایا گیا تھا۔ اس معاملے پرایڈمنسٹریٹر کراچی مرتضیٰ وہاب نے رپورٹ طلب کرلی۔

کراچی چڑیا گھر کا سفید شیر انتقال کرگیا

اس سے قبل 8 جون 2021ء کو بھی کراچی کے چڑیا گھر میں ایک 18 سالہ شیر انتقال کرگیا تھا، تاہم حکام کے مطابق ایشیائی نسل کا ببر شیر اپنی طبعی عمر پوری کرچکا تھا۔

karachi zoo

Tabool ads will show in this div