میٹرواسٹیشن سےملنےوالی مردہ بچی کے قاتل کاپتہ چل گیا

لاش دو ہفتے قبل ملی تھی
Nov 20, 2021

اسلام آباد میں تقریباً 2 ہفتے قبل غیرفعال میٹرو بس اسٹیشن سے ملنے والی 11 سالہ بچی کی لاش کا معمہ حل ہوگیا۔

پولیس نے دعویٰ کیا ہے کہ بچی کے قتل میں اس کے والد واجد کا ہاتھ ہے جس کا اعتراف ملزم نے دوران تفتیش کیا ہے اور جائے وقوعہ کی نشاندہی بھی کی ہے۔

ملزم کے حوالے سے پولیس نے بتایا کہ وہ نشے کا عادی ہے جس کی وجہ سے بچی کی لاش بچی کے چچا کے حوالے کی گئی تھی۔

یاد رہے کہ سری نگر ہائی وے پرزیرتعمیر جی الیون میٹرو اسٹیشن کے واش روم سے بچی کی لاش برآمد ہوئی تھی جس کے جسم پر تشدد کے کئی نشانات بھی پائے گئے۔ اس حوالے سے پولیس نے میٹرو اسٹیشن پر نائٹ اور ڈے شفٹ والے سیکورٹی گارڈز کو شامل تفتیش بھی کیا تھا لیکن بچی کے قاتل کے حوالےسے کچھ پتہ نہیں چل سکا تھا۔

بعد ازاں پولیس نے بچی کے ورثا کو تلاش کرلیا تھا اور لاش بچی کے چچا کے حوالے کی گئی تھی۔ بچی کی تدفین ترلائی کے علاقے میں کردی گئی تھی۔ تاہم بعد ازاں جب بچی کے والد واجد کو شامل تفتیش کیا گیا تو پولیس کو اس قتل میں اس کے ملوث ہونے کا پتہ چلا۔

islamabad police

Tabool ads will show in this div