فواد چوہدری کی بلاول بھٹو کو دلچسپ پیشکش

سماء کے پروگرام سات سے آٹھ میں گفتگو

وفاقی وزیر اطلاعات فواد چوہدری کا کہنا ہے کہ بدھ کے پارلیمنٹ کے مشترکہ اجلاس میں حکومت کی اکثریت ثابت ہوگئی اور اپوزیشن کو شکست ہوئی۔

سماء کے پروگرام سات سے آٹھ میں گفتگو کرتے ہوئے فواد چوہدری کا کہنا تھا کہ میرے ایوان میں موجود رہنے تک 50 سے زائد بلز منظور ہوچکے تھے جبکہ 10 سپلمنٹری بلز کے ساتھ ٹوٹل 70 بلز تھے جو منظور ہونے تھے۔

فواد چوہدری کا کہنا تھا کہ شہبازشریف اور بلاول بھٹو کے بیانات شکست خوردہ لوگوں کی ہے، آج کے اجلاس میں ہمارے پاس 223 اراکین کی اکثریت تھی جس کی بار بار گنتی کی گئی۔

حکومت کے پاس مطلوبہ اکثریت نہ ہونے کے بلاول بھٹو کے بیان پر تبصرہ کرتے ہوئے فواد چوہدری کا کہنا تھا کہ بلاول بھٹو کسی ہوٹل میں 223 اراکین کی اکثریت ثابت کردیں کھانے کا بل میں دے دوں گا۔

فواد چوہدری کا کہنا تھا کہ عدالت جانا ہر شہری کا حق ہے اپوزیشن وہ شوق بھی ضرور پورا کر لے مگر اس کے لیے لیگل گراؤنڈ کا ہونا ضروری ہے۔ انہوں نے کہا کہ آج کے بلز کی منظوری پارلیمنٹ کے مشترکہ اجلاس نے دی اور قانون سازی کا اختیار پارلیمنٹ کو ہی حاصل ہے۔

انہوں نے کہا کہ حکومت کے پاس قومی اسمبلی اور سینیٹ دونوں میں اکثریت ہے، بلاول بھٹو اور شہبازشریف کو کھلے دل سے شکست تسلیم کرلینی چاہیے۔

آصف زرداری کے بیان پر تبصرہ کرتے ہوئے فواد چوہدری کا کہنا تھا کہ انہوں نے چاروں صوبوں کے پارٹی کو 3 ڈویژن تک محدود کردیا ہے ان کی سیاسی بصیرت صرف نام کی ہے۔

Joint session

Tabool ads will show in this div