سماجی کارکن کے نام پر محمد زادہ شہید اینٹی نارکوٹکس فورس قائم

محمد زادہ کا قتل 8 نومبر کو منشیات فروشوں کے ہاتھوں ہوا
Nov 17, 2021

ملاکنڈ میں سماجی کارکن محمد ذادہ کے قتل کے بعد ضلعی انتظامیہ متحرک ہوگئی ہے اور انسداد منشیات کے لیے محمد ذادہ شہید نارکوٹکس فورس بھی قائم کردی گئی ہے جو ڈرگ مافیا کے خلاف کارروائی کرے گی۔

کمشنر ملاکنڈ ڈویژن ظہیرالاسلام نے محمد زادہ شہید اینٹی نارکوٹکس فورس کا افتتاح کرتے ہوئے کہا کہ منشیات فروشوں کی بیخ کنی کے لیے کسی قسم کے کارروائی سے دریغ نہیں کیا جائے گا۔

سید ظہیرالاسلام کا کہنا تھا کہ ڈرگ ڈیلرزاور ان کے سہولتکاروں کو کسی صورت معاف نہیں کیا جائے گا اور نہ ہی ان کے ساتھ کوئی رعایت برتی جائے گی۔

ان کا کہنا تھا کہ محمد زادہ کی موثرآواز دبانے کیلئے ڈرگ ڈیلرزنے انہیں شہید کیا مگر ان کا مشن ہم جاری رکھیں گے۔

انہوں نے کہا کہ اگر کوئی سرکاری اہلکار جرائم پیشہ عناصر کے ساتھ ملوث پایاگیا تو ان کو بھی قانون کے کٹہرے میں کھڑا کرکے مجرموں جیسا سلوک کریں گے۔ اس سے قبل کمشنر ملاکنڈ ڈویژن ظہیرالاسلام نے محمد زادہ کے غمزدہ خاندان کے ساتھ اظہارتعزیت کیا اور شہید کے قبرپر پھولوں رکھے۔

واضح رہے کہ سوشل میڈیا اکٹیوسٹ اور سماجی کارکن محمد زادہ کو 8 نومبر کو سخاکوٹ کے علاقے میں منشیات فروشوں نے فائرنگ کرکے قتل کردیا تھا جس کے بعد علاقہ مکینوں کے احتجاج کے بعد وزیراعلیٰ محمود خان نے ڈپٹی کمشنر اور اسسٹنٹ کمشنر کو ان کے عہدوں سے برطرف کردیا تھا۔

MALAKAND

anti narcotics force

Muhamamd Zada

Tabool ads will show in this div