کراچی:ایکسپو سینٹرمیں عملے کی ہڑتال، ویکسنیشن کا عمل رک گیا

ویکسین لگانے کا عمل رواں برس مارچ سے جاری ہے

کراچی میں کرونا وائرس ویکسین لگانےکےسب سے بڑے مرکز میں تنخواہوں کی عدم ادائيگی کے خلاف کام بند کردیا گیا ہے۔

پیر کو کراچی کے سب سے بڑے ويکسينيشن سينٹر میں ویکسینیٹرز نے ايک بار پھر کام بند کردیا ہے۔ پیرا میڈیکل اور آئی ٹی عملے نے تنخواہوں کی عدم ادائیگی پر ہڑتال کردی ہے۔ ایکسپوسینٹرمیں سیکڑوں افراد صبح سےویکسینيشن کے حصول کیلئے پریشان ہیں۔ عملے کا کہنا ہے کہ 6 ماہ سے تنخواہوں کی ادائیگی کے صرف وعدےکئے جارہے ہیں۔واضح رہے کہ ان ملازمین کو کنٹریکٹ پر محکمہ صحت نے تعینات کیا تھا۔ اس سے قبل بھی عملے کی جانب سے ہڑتال کی گئی تھی۔ کراچی کے ایکسپو سینٹر میں ویکسین لگانے کا عمل رواں برس مئی سے جاری ہے۔

کراچی ایکسپو سینٹر میں 458 نرسز ویکسین لگانے کے فرائض انجام دے رہی ہیں۔ اس سے علاوہ 38 ڈاکٹرز اور 150 سے زائد ڈیٹا آپریٹرز بھی یہاں تعینات کئے گئے ہیں۔ ہر شفٹ میں تقریبا 360 ہیلتھ ورکرز موجود ہوتے ہیں۔ کراچی ایکسپو سینٹر میں روزانہ 30 ہزار افراد کو ویکسین لگانے کی سہولت موجود ہے اور یہ سینٹر 24 گھنٹے کھلا رہتا ہے۔ یہاں قائم 12 رجسٹریشن کاؤنٹرز سمیت 6 بلاکس ہیں جب کہ 96 کیوبیکلز میں ویکسین لگائی جاتی ہے۔

VACCINATION CENTERS

Tabool ads will show in this div