اٹلی میں 50سابق ایئر ہوسٹس کا کپڑے اتار کر احتجاج

ایئرلائن کی بندش سے ہزاروں افراد بےروزگار ہوگئے
فوٹو: ویڈیو سے لیا گیا اسکرین شارٹ
فوٹو: ویڈیو سے لیا گیا اسکرین شارٹ
Italy فوٹو: ویڈیو سے لیا گیا اسکرین شارٹ

اٹلی کے شہر روم میں مالی بحران کا شکار ایئر لائن ’’الیتالیہ‘‘ کی درجنوں سابق ایئر ہوسٹس نے اپنے کپڑے اتار کر احتجاج کیا۔

ہف پوسٹ کے مطابق یونین کے نمائندوں کا کہنا ہے کہ ایئر لائن نے آپریشن بند کر دیا ہے جس سے ہزاروں افراد بے روزگار ہوگئے جبکہ نئے والوں کو کم تنخواہ پر رکھا گیا۔

مالی بحران کا شکار اٹلی کی دہائیوں پرانی ایئر لائن نے اپنی آخری پرواز 14 اکتوبر کو کی تھی، جس کے اگلے روز الیتالیہ کے کچھ طیاروں کا استعمال کرتے ہوئے ایک نئی ایئر لائن ’’آئی ٹی اے‘‘ نے پرواز شروع کی۔ نئی ایئرلائن نے الیتالیہ برانڈ بھی خریدا، لیکن الیتالیہ کے 10ہزار میں سے صرف 3ہزار ملازمین کو رکھا جا رہا ہے۔

یونین کے عہدیداروں کا کہنا ہے کہ جو لوگ ’’آئی ٹی اے‘‘ کے لیے کام کر رہے ہیں انہیں کم تنخواہ پر رکھا گیا ہے۔

روم کی کیپٹول ہل پر تقریباً 50 سابق ایئر ہوسٹس نے قطاروں میں کھڑے ہوکر خاموش احتجاج کیا اور اسی دوران تمام سابق ایئر ہوسٹس نے اپنے کپڑے اتار کر صرف ’’اَنڈر گارمنٹس‘‘ پہنے رکھے۔

تمام سابق ایئر ہوسٹس ننگے پاؤں رہ کر چند منٹ کے لیے خاموش رہیں۔ پھر انہوں نے دوبارہ اپنے کپڑے اور جوتے اکٹھے کیے اور ایک ساتھ چلائی کہ ’’ہم الیتالیہ ہیں‘‘۔

یونین کے رہنما حکومت پر زور دے رہے ہیں کہ وہ بے روزگار افراد کو ملنے والے فوائد میں پانچ سال تک توسیع کرے۔

Tabool ads will show in this div