لاہور: ہراسانی کے الزام میں ایک اورڈاکٹر کیخلاف مقدمہ درج

 گزشتہ روز گرفتار ڈاکٹر جوڈیشل ریمانڈ پر جیل منتقل
Oct 13, 2021

لاہور میں پولیس نے اسپتال کی ملازم خاتون کو ہراساں کرنے کے الزام میں ایک اور ڈاکٹر کیخلاف مقدمہ درج کرلیا۔ نرسز اور لیڈی ڈاکٹرز کی غیراخلاقی ویڈیوز بنانے والے ڈاکٹر کو عدالت نے جوڈیشل ریمانڈ پر جیل بھجوا دیا۔

لاہور کے علاقے شاہدرہ کے اسپتال کی خاتون ملازم کو ہراساں کرنے والے ڈاکٹر کیخلاف مقدمہ درج کرلیا گیا۔ متاثرہ خاتون کے مطابق ڈاکٹر شہباز موبائل پر میسجز کرکے اسے بلاتا رہا، بات نہ ماننے پر اس نے ہراساں کرنا اور ذہنی اذیت دینا شروع کردی۔

پولیس نے خاتون کی درخواست پر ڈاکٹر شہباز کیخلاف مقدمہ درج کرلیا گیا۔

مزید جانیے: لاہور میں خواتین اسٹاف کی غیراخلاقی ویڈیوز بنانے والا ڈاکٹر گرفتار

دوسری جانب گزشتہ روز گرفتار کئے گئے ڈاکٹر عبداللہ حارث کو عدالت میں پیش کردیا گیا، عدالت نے ملزم کو 5 روزہ جوڈیشل ریمانڈ پر جیل بھیج دیا۔

ڈاکٹر پر الزام ہے کہ اس نے نرسز اور لیڈی ڈاکٹرز کو نشہ آور مشروب پلاکر ان کی غیر اخلاقی ویڈیوز بنائیں، متاثرہ نرس کی شکایت پر ملزم کو گرفتار کیا گیا تھا۔

Harassment Case

Tabool ads will show in this div