انورمقصود نے مشہور پروگرام 'ففٹی ففٹی' کیوں بند کیا تھا؟

اچھی چیز اپنےوقت پرختم ہوجائےتو لوگوں کویادرہتی ہے

انور مقصود نے پہلی بار آن ایئر انکشاف کیا کہ انہوں نے معروف کامیڈی پروگرام 'ففٹی ففٹی' سے کنارہ کشی اختیار کر کے 'شوشا' نامی پروگرام کیوں شروع کیا تھا، جسے آگے جاکر دیگر ناموں سے بھی پیش کیا گیا۔

وائس آف امریکہ سے بات کرتے ہوئے انہوں نے بتایا کہ جب 'ففٹی ففٹی' کا آغاز ہوا تھا تو اس وقت ان کے ساتھ کام کرنے والے ان کی بہت عزت کرتے تھے۔ لیکن جیسے جیسے پروگرام مشہور ہوتا گیا وہی ٹیم ہِٹ ہو گئی۔

انہوں نے بتایا کہ ایک مرتبہ جنرل ضیاء الحق نے 'ففٹی ففٹی' کی پوری ٹیم کو انعام دینے کے لیے مدعو کیا لیکن انہیں نہیں بلایا۔ جب انہوں نے اس کی وجہ دریافت کی تو انہیں بتایا گیا کہ کامیڈی شو میں تو اداکاروں کا کام ہوتا ہے لکھنے والوں کا نہیں۔

انور مقصود نے کہا کہ یہی وجہ تھی کہ انہوں نے 'شوشا 'شروع کیا جس میں انہوں نے سلیم ناصر، شکیل، جاوید شیخ اور شفیع محمد جیسے سنجیدہ اداکاروں سے کامیڈی کرائی۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ ٹی وی کے ساتھ ان کی ناراضگی کا سلسلہ ہمیشہ سے ہی چل رہا ہے اور اسی وجہ سے انہوں نے 'آنگن ٹیڑھا' کو ختم کرنے کا فیصلہ بھی کیا۔

انور مقصود کے بقول 'آنگن ٹیڑھا' میں ان کے کئی جملوں پر ٹی وی سے تعلق رکھنے والوں کو اعتراض تھا لیکن پھر بھی وہ اس سیریز کو آگے بڑھانے کے خواہش مند تھے۔

ان کے بقول اگر اچھی چیز اپنے وقت پر ختم ہو جائے تو لوگوں کو یاد رہتی ہے اور اگر وہ بدستور چلتی جائے تو تباہی ہوتی ہے جس کی سب سے بڑی مثال مارشل لا کی ہے۔ جو ایک وقت کے لیے ہوتا ہے کہ الیکشن کرائیں اور چلے جائیں لیکن اگر یہ کئی کئی برس تک جاری رہے تو تباہی ہو جاتی ہے۔

Fifty Fifty

ANWAR MAQSOOD

Tabool ads will show in this div