رکن سندھ اسمبلی عمران شاہ کیخلاف سوتیلی والدہ کی درخواست ہائيکورٹ میں مسترد

درخواست گزار نے موقف اختیار کیا کہ ‎عمران شاہ کے والد ڈاکٹر محمدعلی شاہ نے مجھ سے دوسری شادی کی تھی

رکن سندھ اسمبلی عمران شاہ کے خلاف سوتیلی والدہ کی درخواست سندھ ہائيکورٹ نے مسترد کردی ہے۔

سندھ ہائی کورٹ نے جمعہ کو پی ٹی آئی کے رکن سندھ اسمبلی ڈاکٹر عمران علی شاہ کے خلاف ان کی سوتیلی والدہ ڈاکٹر ریحانہ شاہ کی درخواست کی سماعت کی۔ ڈاکٹر ریحانہ شاہ نےعمران شاہ پر اُن کا جعلی طلاق نامہ جمع کرانے کا الزام لگایا تھا۔ درخواست گزار نے موقف اختیار کیا کہ ‎عمران شاہ کے والد ڈاکٹر محمدعلی شاہ نے مجھ سے دوسری شادی کی تھی۔ ‎محمد علی شاہ کے انتقال کے بعد عمران علی شاہ و دیگر نے جعلسازی کی اور لیاقت آباد کی یونین کمیٹی سے جعلی طلاق نامہ تیار کرایا۔

ریحانہ شاہ نے درخواست میں بتایا کہ ‎محمد علی شاہ سے میرا ایک بیٹا ہے اور خوف زدہ ہوکربیرون ملک مقیم ہوں۔ ریحانہ شاہ نےعدالت کو بتایا کہ ان کا ‎طلاق نامہ جعلی ثابت ہوچکا ہے اور ‎ڈپٹی ڈائریکٹر کے حکم کے باوجود یونین کمیٹی جعلی طلاق نامہ منسوخ نہیں کررہی ہے۔

عمران شاہ نے بھائی کے ساتھ مل کر بدترین تشدد کیا، سوتیلی والدہ کا الزام

تین برس قبل ڈاکٹر ریحانہ شاہ نے بتایا تھا کہ ڈاکٹر محمد علی شاہ نے مجھ سے 1989ء شادی کی، میری شادی کو پہلی بیوی کے بچوں نے قبول نہیں کیا، عمران شاہ اور جنيد شاہ نے اے او کلینک آکر بدترين تشدد کيا، سرجن روم ميں بند کرکے زدو کوب کیا گیا۔

SINDH HIGH COURT

Imran ali shah

Tabool ads will show in this div