گجرنالہ متاثرین کی آبادکاری جلدازجلد یقینی بنانے کے احکامات جاری

سیکریٹری بلدیات سندھ کے دفتر میں اہم اجلاس

Secretary Sindh LG

سیکریٹری بلدیات، ہاؤسنگ و ٹاون پلاننگ سندھ انجینئر سید نجم احمد شاہ نے کہا ہے کہ گجر نالہ متاثرین کی آباد کاری اور رہائش کے انتظامات کے حوالے سے اقدامات کو تیز تر بنایا جائے۔

بدھ 6اکتوبر کی زیر صدارت سیکریٹری بلدیات سندھ کے دفتر میں اہم اجلاس کا انعقاد کیا گیا جس میں ایڈیشنل سیکریٹری ٹاون پلاننگ، ڈی جی ایم ڈی اے اور ڈی جی ایل ڈی اے سمیت دیگر متعلقہ افسران شریک ہوئے۔

اس موقع پر سیکریٹری بلدیات سندھ نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ تمام متاثرین گجر نالہ کی رہائش و آبادکاری کے حوالے سے دستیاب وسائل پر مشتمل جامع رپورٹ مرتب کی جائے اور کسی بھی تاخیر کے بنا کارروائی کا باقاعدہ آغاز کیا جائے۔

نجم احمد شاہ کے استفسار پر ان کو بتایا گیا کہ ساڑھے چھ ہزار متاثرین کی ازسرنو آبادکاری کا بندوبست کرنے کے حوالے سے جگہ کا انتخاب کرنا باقی ہے۔

سیکریٹری لوکل گورنمنٹ سندھ نے کہا کہ دستیاب زمینوں کا تفصیلی سروے ہنگامی بنیاد پر منعقد کیا جائے اور اس امر کا خصوصی طور پر خیال رکھا جائے کہ تمام متاثرین کو آباد کرنے سے قبل پانی، بجلی، گیس سمیت تمام بنیادی ضروریات زندگی اور انفرا اسٹرکچر مکمل طور پر موجود ہو۔

نجم احمد شاہ نے ہدایت دی کہ کمشنر کراچی کے دفتر سے مکمل متاثرین کی تعداد اور ڈیٹا کی دوبارہ تصدیق کی جائے۔

شرکا اجلاس کی جانب سے سیکریٹری بلدیات سندھ کو رائے دی گئی کہ متاثرین گجر نالہ کی آبادکاری کے حوالے سے ملیر ڈیولپمنٹ اتھارٹی موزوں علاقہ ثابت ہوگی کیونکہ دیگر دستیاب جگہوں کے مقابلے میں ایم ڈی اے نسبتاً گنجان اور قریب ہے۔

انجینئر سید نجم احمد شاہ نے اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ جلد از جلد نالہ متاثرین کی آبادکاری کو یقینی بنانے کے لیے پراجیکٹ کا پی سی1 تیار کیا جائے، کسی بھی قسم کی مبالغہ آرائی اور غیر ضروری تفصیلات سے مسودے کو پاک رکھا جائے۔

سیکرٹری بلدیات سندھ کا کہنا تھا کہ ایم ڈی ملیر ڈویلپمنٹ اتھارٹی اور ایم ڈی لیاری ڈویلپمنٹ اتھارٹی کو مشترکہ سروے کرنے کی ہدایت کرتے ہوئے زمینی حقائق سے آگاہ کرنے کا بھی حکم دیا۔

Gujjar Nullah

Tabool ads will show in this div