کراچی میں موٹر سائیکل چلانے والوں کیلئے نیا حکم نامہ جاری

خلاف ورزی کرنے والے پر جرمانہ عائد ہوگا
فائل فوٹو
فائل فوٹو
فائل فوٹو

وزیراعلیٰ سندھ نے نئے حکم نامے میں موٹر سائیکل چلانے والوں کیلئے سائیڈ مرر لگانا لازمی قرار دیا ہے، جب کہ خلاف ورزی کرنے والوں پر جرمانہ عائد کیا جائے گا۔

وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ کی زیر صدارت منگل 5 اکتوبر کو ہونے والے صوبائی کابینہ کے اجلاس میں موٹر وہیکل رولز میں ترمیم کی منظوری دی گئی۔ ترمیم کے مطابق اجلاس میں موٹر سائیکل سواروں کو سیفٹی کی خاطر سائیڈ مرر لگانا لازمی قرار دیا گیا۔

وزیراعلیٰ سندھ نے متعلقہ حکام کو ہدایت دیں کہ موٹر سائیکل میں سائیڈ مرر نہ لگانے پر جرمانہ عائد کیا جائے۔

یہاں یہ بات بھی قابل ذکر ہے کہ ماہ اگست میں سندھ ہائی کورٹ میں شہری کی جانب سے درخواست دائر کی گئی تھی، جس میں یہ مؤقف اختیار کیا گیا تھا کہ شہر میں بڑھتے ہوئے ٹریفک حادثات کا زیادہ تر شکار موٹر سائیکل سوار ہورہے ہیں اور موٹر سائیکل میں سائیڈ مرر نہ ہونا ان حادثات کی بڑی وجہ ہے۔

آئینی درخواست دائر میں شہری واجد عرفان نے یہ بھی مؤقف اختیار کیا تھا کہ سندھ موٹر وہیکل آرڈیننس میں ترمیم کرکے موٹر سائیکل کو سائیڈ مرر سے مستثنیٰ قرار دیا گیا ہے جس کی وجہ سے حادثات میں خطرناک حد تک اضافہ ہوگیا ہے۔

محکمہ ایکسائز اینڈ ٹیکسیشن ڈپارٹمنٹ ذرائع کے مطابق کراچی میں ایک اندازے کے مطابق 27 لاکھ سے زائد موٹر سائیکلیں رجسٹرڈ ہیں، جب کہ دو سے ڈھائی لاکھ موٹر سائیکل دوسرے صوبوں سے بھی لا کر استعمال کی جارہی ہیں۔

دائر درخواست میں آغا خان یونیورسٹی اسپتال کی رپورٹ کا حوالہ بھی دیا گیا، جس کے مطابق سنہ 2015 میں ٹریفک حادثات میں 1021 اموات ہوئیں۔

Tabool ads will show in this div