بچوں کووالدین کی اجازت کےبغیر ویکسین نہیں لگاسکتے، مراد راس

فیصلہ کرنے میں کچھ وقت لگے گا
Sep 30, 2021

Murad Raas Media Talk Lhr 30-09

پنجاب کے وزیر تعلیم مراد راس نے والدین کی اجازت کے بغیر بچوں کو ویکسین لگانے سے انکار کر دیا۔

لاہور ميں ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے صوبائی وزیر تعلیم مراد راس نے کہا کہ اسکولوں میں ویکسین لگانے سے پہلے والدین کو راضی کرنا ہوگا اور والدین کے ماننے پر ہی بچوں کو کرونا ویکسین لگائی جا سکتی ہے۔

انہوں نے کہا کہ ابھی تک اسکولز میں ویکسی نیشن کیمپس نہیں لگائے گئے۔

صوبائی وزیر نے کہا کہ ہمیں فیصلہ کرنے میں تھوڑا وقت لگے گا اور اس متعلق محکمہ صحت سے بات چل رہی ہے۔

واضح رہے کہ نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر (این سی او سی) نے 12 سے 15 سال کے بچوں کو اسکولز میں ویکسین لگانے کا فیصلہ کیا تھا۔

سربراہ این سی او سی کا کہنا تھا کہ ویکسینیشن ڈرائیو تعلیمی اداروں میں شروع کی جائے گی اور اس سلسلے میں طلباء کی آسانی کیلئے تعلیمی اداروں میں ہی سہولت دی جائے گی۔

وفاقی وزیر کی جانب سے ٹوئٹ میں یہ نہیں بتایا گیا کہ بچوں کیلئے کس ویکسین کا انتخاب کیا گیا ہے اور پہلے مرحلے میں یہ مہم کب اور کہاں کہاں شروع ہوگی۔

اس سے قبل محکمہ صحت کا کہنا تھا کہ این سی او سی کی ہدایات کے مطابق 15 سے 18 سال کے طلباء کو فائزر ویکسین لگائی جائے گی۔

اس سلسلے میں ضلعی محکمہ صحت کی جانب سے موبائل ویکسینیشنز ٹیمیں تعلیمی اداروں میں بھیجی جائیں گی۔ فیڈرل ڈائریکٹوریٹ، فیرا اور تمام نجی تعلیمی ادارے، ضلعی محکمہ صحت کی ویکسینیشن کے عمل میں معاونت کریں گے۔

CORONA VACCINE

MURAD RAAS

Tabool ads will show in this div